- الإعلانات -

عوام کا وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارپر اعتماد

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے اپنے اب تک کے مختصر ترین دور حکومت میں عوامی فلاح و بہبود کے بہت سے کام کئے ۔ عثمان بزدار کی پنجاب حکومت نے تو فلاحی کاموں کا ایک تانتا سا باندھ دیا ہے ۔ کچھ کام تو ایسے ہیں جو سابقہ حکومت اپنے دس سالہ دور میں بھی نہ کر سکی اور عثمان بزدار نے اقتدار سنبھالتے ہی اس کی طرف توجہ دی ۔ سب سے پہلے تو وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے صوبے کے تمام اضلاع اور ڈویژنز میں غریب اور مسافر افراد کےلئے پناگاہیں تعمیر کرنے اور ان میں قیام و طعام کی سہولیات فراہم کرنے نہایت ہی احسن قدم اٹھایا ۔ پنجاب کے کئی شہروں میں پناگاہیں مکمل طور پر فعال ہو چکی ہیں ۔ یہاں بے گھر مسافروں ، غریب لوگوں کو نہ صرف تحفظ کے ساتھ رہائش اور کھانا مہیا کیا جاتا ہے بلکہ بیماری کی صورت میں مفت علاج کی سہولت بھی فراہم کی گئی ہے ۔ پنجاب میں مختلف محکموں کے 177 ریسٹ ہاوَسز کو عوام کےلئے کھول دیا ۔ یوں پنجاب میں سفر کرنے والے عام شہری خصوصاً تفریحی مقامات پر بنے ہوئے ریسٹ ہاوَسز میں ایک رات کا 1500 سے 3000 تک کرایہ ادا کر کے قیام کر سکتے ہیں ۔ اس سے قبل یہ ریسٹ ہاوَسز صرف سرکاری عہدیداروں کےلئے ان کے ذاتی استعمال میں ہوتے تھے جو کئی کئی دن تک اپنے پورے خاندانوں کے ساتھ یہاں مفت سرکاری خرچ پر قیام کرتے اور ان کے جانے کے بعد ان ریسٹ ہاوَسز کی مرمت اور تزئین و آرائش کا کام دوبارہ کروانا پڑ جاتا تھاجس پر الگ سے خرچہ آتا تھا ۔ اب عام لوگ مہنگے ہوٹلوں میں قیام کرنے کی بجائے انتہائی کم قیمت پر ان ریسٹ ہاوَسز میں قیام کر سکتے ہیں ۔ پنجاب ایک زرعی صوبہ ہے ۔ پورے ملک کی زراعت کا انحصار پنجاب پر ہوتا ہے ۔ لہٰذا وزیر اعلیٰ پنجاب نے پنجاب میں ایگریکلچرل مارکیٹنگ کمپلیکسز بنانے کا فیصلہ کیا اور پہلے مرحلے میں لاہور اور دوسرے مرحلے میں راولپنڈی ، گوجرانوالہ، شیخوپورہ اور ڈی جی خان میں یہ منصوبہ تکمیل تک پہنچے گا ۔ ان ایگریکلچرل مارکیٹنگ کمپلیکسز میں فوڈ ٹیسٹنگ لیبز بنائی جائیں گی جہاں بین الاقوامی طرز پر گریڈنگ اور اشیاء کے معیار کا تعین ہوگا ۔ یہاں جدید طریقے سے مچھلی، پھلوں ، سبزیوں اور پھولوں کی مارکیٹنگ کی سہولیات میسر ہوں گی ۔ یوں ہم زرعی شعبے سے حاصل ہونے والی آمدنی میں کئی گنا اضافہ کر سکتے ہیں ۔ دہشت گردی کے واقعات میں شہید شہریوں کے اہل خانہ کیلئے بھی امدادی پیکیج کا اعلان کرتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ ’’خراج شہداء پروگرام‘‘ کے تحت دہشت گردی کے واقعات میں شہید شہریوں کے خاندانوں کی کفالت کی جائے گی اور شہید ہونے والے شہریوں کی بیواءوں اور یتیم بچوں کی کفالت کو اس وقت تک یقینی بنایا جائے گا جب تک وہ اپنے پاءوں پر کھڑے نہ ہو جائیں ۔ اگلے مالی سال کے بجٹ میں ’’ خراج شہداء پروگرام‘‘ کیلئے 30 کروڑ روپے مختص کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ پنجاب میں سمارٹ کارڈ کا اجراء اور اوورلوڈنگ کی روک تھام کا پروگرام بھی متعارف کرایا گیا ہے ۔ جس میں پرانے طرز کی رجسٹریشن کاپی کی بجائے ایک سمارٹ کارڈ کے اجراء کا فیصلہ کیا گیا ہے جس میں شناختی کارڈ کی طرح کا تمام ڈیٹا موجود ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ پنجاب بھر میں کمرشل گاڑیوں کو اوورلوڈنگ سے روکنے کےلئے مناسب اقدامات کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے ۔ اس کےلئے سرگودھا، چکوال، رحیم یارخان، جھنگ ، چنیوٹ ، مظفر گڑھ ، اٹک، منڈی بہاوَالدین اور بہاولپور میں مستقل ویٹ سٹیشن قائم کئے جا رہے ہیں کیونکہ اوورلوڈنگ کی وجہ سے کئی دفعہ جان لیوا حادثات بھی جنم لیتے ہیں ۔ یہ منصوبے صوبے میں گڈ گورننس اور فنانشل ڈسپلن کی بہترین مثال ہے ۔ ان سے شہریوں کی زندگی میں آسانیاں پیدا ہوں گی اور ان کے دیرینہ مسائل حل ہوں گے ۔ پنجاب میں زرعی ترقی پر خصوصی توجہ دی گئی ہے اور کاشتکاروں کیلئے کھاد ، بیج ،کیڑے مار ادویات اور قرضوں کاحصول آسان بنایا گیا ہے ۔ ان اقدامات کے ساتھ ساتھ صوبہ پنجاب کا بجٹ ہر اعتبار سے متوازن اور جامع ہے جس سے صوبے میں اقتصادی ترقی میں اضافہ ہوگا اور شہریوں کی ضروریات پوری ہوں گی ۔ اتنا اچھا اور متوازن بجٹ پیش کرنے پر وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ہم یہ کہتے ہیں کہ آپ کی انتھک کاوشوں اور بے پناہ محنت کے باعث اب غریب عوام کی قسمت بدل کر ہی رہے گی ۔ یہ تمام کام عوامی فلاح و بہبود اور ملکی ترقی کے زمرے میں آتے ہیں جن کے آغاز کا سہرا وزیراعلی پنجاب سردارعثمان بزدار کے سر ہے ۔ اسی وجہ سے عوام نے انھیں زبردست خراج تحسین پیش کیا ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ وہ گیلپ سروے میں سب سے زیادہ ووٹ لے کر پورے ملک میں اول نمبر پر آئے ہیں ۔ یہ عوام کا ان پر اعتماد کا مظہر ہے ۔ ابھی ان کو اقتدار سنبھالے صرف نو ماہ ہی ہوئے ہیں تو عوام کی محبت کا یہ حال ہے ۔ آگے چل کر وہ نہ صرف مزید عوامی محبتیں سمیٹیں گے بلکہ عوام کے دکھ درد بھی دور کریں گے ۔ گیلپ پاکستان کی جانب سے کئے گئے تازہ ترین سروے کے مطابق پاکستانیوں کی اکثریت یعنی58فیصد شہریوں نے عمران خان کی انفرادی کارکردگی کو اطمینان بخش قرار دیا ۔ وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار اپنی شاندار کارکردگی کی بدولت وزرائے اعلی سندھ، خیبر پختونخواہ اور بلوچستان کے مقابلے بہترین قرار پائے گئے ۔ پنجاب میں عثمان بزدار کی حکومت نے 9 ماہ میں عوام کی خدمت کی ہے اور ان کی کارکردگی عوام کے سامنے ہے ۔ یہ بولتے کم اور کام زیادہ کرتے ہیں ۔ عوام کی خدمت کا مشن لے کر آئے ہیں اور مشن مکمل کر کے ہی دم لیں گے ۔ کام کرنے والے افراد نمائشی منصوبوں اور بلند و بانگ دعووَں کی سیاست پر یقین نہیں رکھتے ۔ پاکستان کے عوام باشعور ہیں ۔ وہ سب جانتے ہیں ۔