- الإعلانات -

کشمیر کے ننھے مظلو م کی کہانی

کشمیر کا ننھا مظلوم بچہ بھی اُن بچوں کی صف میں شامل ہو گیا، جن کے پیارے والدین کو اُن کے سامنے سفاک دشمنوں نے اُن کو شہید کیا ۔ اس محصوم بچے کی تصویر شاءع ہوئی ۔ وہ اپنے نانا کی الٹی پڑی لاش کے اُوپر بیٹھا ہے ۔ رو رو کے ظلم کی داستاں سنا رہا ہے ۔ ویڈیو میں کہتا ہے کہ میرے نانا کو ٹھا ٹھا ٹھا گولیوں مار کر بھارتی فوج نے شہید کر دیا ۔ اس مظلوم کی یہ باتیں سن کر انصاف پسند لوگوں کے کلیجے منہ کو آ گئے ۔ تین سالہ نواسے کے سامنے مظلوم کشمیری کو سپرد خا کر دیا گیا ۔ اس شہید کے جنازے میں بڑی تعدا د میں کشمیریوں نے شرکت کی ۔ کشمیریوں نے پہلے کی طرح بھارت کے خلاف نعرے لگائے ۔ دشمنوں ہمارے وطن کشمیر سے نکل جاءو ۔ ہ میں پاکستان میں شامل ہونا ہے ۔ یہ کوئی نئی بات نہیں ۔ اس سے قبل اسرائیل نے ۸۴۹۱ ء سے جنگیز اور ہلاکوکا انسانیت کش کھیل فلسطین میں مسلمان بچوں کے ساتھ جاری تھی ۔ فلسطین کے محصوم بچوں کی لاشیں اس کے والدین ہاتھوں میں اُٹھائے اسرائیلی فوجیوں کے لیے بددعائیں کرتے اور فلسطینی بچوں کے سینوں پر بندوق تانی اسرائیل فوجی کی تصویری وائرل ہوتی رہیں ہیں ۔ شیطان کبیر امریکا نے عراق پر حملہ کر کے لاکھوں بچوں کو شہید کیا ۔ محصوم بچے دودھ نہ ملنے کی وجہ سے لاکھوں کی تعداد میں شہید ہو گئے ۔ اس سے پہلے افغانستان میں بھی یہی ابلیسی کھیل کھیلا گیا ۔ دنیا نے مسلمان بچے کی لاش سمندر نے اپنے ساحل پر پھینکی کہ شاید دنیا کو اس بچے پر ترس آئے ۔ شام کا بچہ اپنے ماں کی لاش سامنے رکھ کر کہہ رہا ہے میں اللہ سے قیامت کے دن تمھارے ظلم کی شکایت کروں گا،کی بھی تصویر وائرل ہوئی تھی ۔ لیبیا، بوسنیا، شام، چیچنیا، برما اور ساری دنیا میں مسلمان بچوں کو بے دردی سے تہ تیغ کیا گیا ۔ مسلمان بچوں کی تو دنیا میں کوئی حیثیت ہی نہیں ۔ یہ کیوں ہے کہ مسلمانوں نے اپنی اصل چھوڑ دی ہے ۔ مسلمانوں کی اصل جہاد فی سبیل اللہ ہے ۔ جب تک مسلمانوں جہاد شروع نہیں کرتے ایسے ہی قتل ہوتے رہیں گے ۔ اقوام متحدہ نے بھارتی درندگی کا نوٹس لیا ۔ سیکرٹیری جرنل نے اپنے بیان میں کہا کہ بشیر احمد کو قتل کرنے والوں کو گرفتار کے کے سخت سزا دی جائے ۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے بھی اس کی مذمت کی اور کہا کہ بھارتی اقدام بچوں کے قانون کی بھی خلاف وردی ہے ۔ ساری دنیا نے اس کشمیری بچے کی فریاد سنی ۔ اس بچے نے اپنے اقبالی بیان میں کہا کہ بھارتی فوج نے ٹھا ٹھا ٹھا گولی چلا کر میرے نانا کو شہید کیا ۔ سفاک بھارتی فوجیوں نے بشیر احمد کی لاش کو پیروں تلے روندا ۔ پاکستان کی طرف سے بیان آیا کہ دل ہلا دینے والی تصویر دنیا کو ہمیشہ یاد رہے گی ۔ آزادکشمیر وزیر اطلاہات نے کہا کہ مودی اب کشمیری کے بچوں کا بھی قصاب بن چکا ہے ۔ دنیا اس کشمیری بچے کو انصاف دلائے ۔ کشمیراسمبلی کے اسپیکر نے کہا کہ انتہائی دلخراش ویڈو دہشت گرد اسٹیٹ بھارت کی واضع تصویر دکھا رہے ہے ۔ کشمیر بھارت اور پاکستان کے درمیان ایک مشترکہ مسئلہ ہے ۔ تقسیم ہند کے بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ معاہدے کے مطابق کشمیر کو پاکستان میں شامل ہونا تھا ۔ تقسیم کے معاہدے میں کہا گیا تھا کہ برعظیم میں جہاں ہندو اکثریت میں وہ علاقے بھارت اورجن علاقوں میں مسلمان زیادہ ہیں وہ پاکستان میں شامل ہوں گے ۔ کشمیر میں مسلمان نوے فیصد سے زیادہ تھے ۔ اس لیے کشمیر کو پاکستان میں شامل ہونا تھا ۔

(;224224;جاری ہے)