- الإعلانات -

وزیرخارجہ کادورہ چین،خطے میں امن کیلئے ملکر کام کرنے پر اتفاق

پاکستان اور چین نہایت قریبی، سیاسی، معاشرتی، معاشی تعلقات کی بنا پر دنیا بھر میں جانے اور پہچانے جاتے ہیں ۔ یہ تعلقات پچھلی سات دہائیوں پر محیط ہیں ۔ اس تعلق کی جڑیں نہایت گہری اور پائیدار ہیں جو کہ یقینا دونوں ممالک کی قیادت کی سمجھ بوجھ اور مستقبل کے مشترکہ نقطہ نظر کی وجہ سے ممکن ہوسکی ہے ۔ چین کی پاکستان میں سب سے بڑی سرمایہ کاری پاک چین اقتصادی راہداری منصوبہ کی شکل میں شروع ہوئی ہے ۔ سی پیک سے پاکستان کا چین کے مغربی سنکیانگ صوبے سے بذریعہ شاہراہ رابطہ ہو جائے گا ۔ جس سے معاشی ترقی کا ایک نیا دور منسلک ہے اور امید کی جا رہی ہے کہ سی پیک منصوبہ سے پاکستان کے توانائی کے مسائل حل ہو جائیں گے اور اس کے ساتھ یہ منصوبہ شاہراہوں اور ریلویز کا ایک جال بچھا دے گا ۔ پاکستان کے ساتھ چین کو بھی اس دوستی سے فائدہ ہوا ہے ۔ جس کی وجہ سے جنوبی ایشیا میں طاقت کا توازن کبھی بھی بھارت کی طرف نہ جھک سکا اور بھارت کا وہ خواب جس میں وہ خود کو جنوبی ایشیا کے علاقے پر اپنا تسلط یا علاقائی طاقت سمجھتا ہے کبھی شرمندہ تعبیر نہ ہو سکے گا ۔ مسئلہ کشمیرپرچین کی حمایت اس امر کا یقینی ثبوت ہے کہ کشمیریوں کی قربانیاں رنگ لا رہی ہیں ۔ مودی نے ان کے حوصلوں کو شکست دینے کےلئے کھلی وحشت و درندگی کا جو ہتھیار آزمایا، اس کے نتاءج الٹے نکلے ہیں ۔ اس کے نتیجے میں دنیا پر مودی حکومت کا بھیانک چہرہ پوری طرح بے نقاب ہوگیا ہے اور کشمیریوں کو ان کا حق ملنے کے آثار نمایاں ہو رہے ہیں ۔ چین پاکستان کا ہمسایہ اور سب سے قریبی دوست ملک مانا جاتا ہے، کشمیر کے مسئلے پر دونوں ممالک کے موقف میں یکسانیت بھی پائی جاتی ہے ۔ کشمیر کے مسئلے پر چین کے اہم بیانات سامنے آتے رہتے ہیں ۔ مسئلہ کشمیر دو طرفہ معاملہ ہے جسے پاکستان اور بھارت کو باہمی رضامندی اور پرامن طریقے سے حل کرنا چاہیے ۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی چین کے صوبے ہینان پہنچنے ۔ چینی وزیر خارجہ وانگ ژی نے شاہ محمود کا استقبال کیا ۔ دونوں وزرا خارجہ نے باہمی تعلقات اور اہم امور پر تبادلہ خیال کیا ۔ شاہ محمود نے سٹرٹیجک مذاکرات میں حصہ لیا ۔ مزید بر;200;ں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی چینی ہم منصب کے ساتھ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات خطے کی سکیورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔ پاک چین راہداری سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا ۔ وزیر خارجہ نے دورہ چین کی دعوت پر چینی ہم منصب کا شکریہ ادا کیا ۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ پاک چین لازوال دوستی کو مزید مستحکم بنانے کیلئے پرعزم ہیں ۔ وزرا خارجہ کی ملاقات کا اعلامیہ جاری کیا گیا ۔ اعلامیہ کے مطابق دونوں وزرا خارجہ نے کرونا علاقائی و بین الاقوامی امور پر تبادلہ خیال کیا ۔ دونوں ممالک نے خطے میں امن ترقی کیلئے مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا ۔ باہمی مفاد کے تحفظ کیلئے بھی مشترکہ اقدامات پر اتفاق کیا ۔ کرونا کے خاتمے کیلئے دونوں ممالک نے ویکسین کی تیاری میں تعاون بڑھانے کا فیصلہ کیا ۔ پاکستان چین نے صحت کے شعبے میں مل کر ;200;گے بڑھنے پر اتفاق کیا ۔ اتحاد اور تعاون ہی بیماری کے خلاف موثر ہتھیار ہے ۔ چینی وزیر خارجہ نے کہا کہ کشمیر حل طلب تنازعہ ہے مسئلہ یو این او سلامی کونسل کی قراردادوں کے مطابق حل کرنا چاہئے ۔ چین ہر اس اقدام کی مخالفت کرے گا جس سے مسئلہ مزید پیچیدہ ہو ۔ دونوں ممالک نے افغان مسئلہ میں تعاون مزید موثر بنانے پر اتفاق کیا ۔ افغان حکومت اور طالبان کے درمیان مذاکرات شروع کرنے کے اقدامات قابل تحسین ہیں ۔ افغان مفاہتی عمل میں پاکستان کی کوششوں کو سراہتے ہیں ۔ پاکستان نے خطے میں امن کیلئے مثالی کردار ادا کیا ۔ دریں اثنا وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ پاکستان اور سعودی عرب ایک دوسرے کی ضرورت ہیں ۔ ایک سال میں مقبوضہ کشمیر کے حالات میں تبدیلی آئی ہے ۔ کشمیر میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ کسی سے پوشیدہ نہیں ۔ کشمیر کی حالت تیزی سے بگڑ رہی ہے ۔ ;200;ج بھارت کے اندر سے بھی ;200;وازیں اٹھنا شروع ہوگئی ہیں ۔ مودی سرکاری کی کشمیر پالیسی سے کشمیری نالاں ہیں ۔ حالات پہلے سے زیادہ خراب ہوچکے ہیں ۔ وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ چین ہر کڑے وقت میں ہمارے ساتھ کھڑا رہا ہے ۔ سی پیک کی اہمیت سے کوئی انکار نہیں کرسکتا ۔ مزید بر;200;ں شاہ محمود قریشی نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے پختہ عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی قوم زیادہ متحد اور مستحکم ہے ۔ دہشت گردی کے شکار افراد کی یاد اور انہیں خراج عقیدت پیش کرنے کے عالمی دن کے موقع پر ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ باہمت پاکستانی قوم نے روشن خیالی، رواداری اور باہمی محبت کی جن اقدار کا مظاہرہ کیا ۔ اس نے ہ میں عدم رواداری، منافرت اور پرتشدد قوتوں کے خلاف اور زیادہ متحد اور مستحکم بنا دیا ہے ۔ اور ہمارا عزم غیر متزلزل ہے ۔ چینی وزیر خارجہ نے کہا کہ چین پاکستان کی علاقائی سلامتی خود مختاری کی حمایت جاری رکھے گا ۔ دوسری جانب چین کے صدر شی جن پنگ نے کہا کہ مشترکہ مستقبل کیلئے پاکستان کے ساتھ ملکر کام کرنے پر تیار ہیں ۔ بیلٹ اینڈ روڈ انیشیٹو کے تحت چین پاکستان اقتصادی راہداری کا سنگ میل منصوبہ دونوں ممالک کی سدابہار سٹرٹیجک تعاون پر مبنی شراکت داری کو ترقی اور مشترکہ مستقبل کے ساتھ دونوں ممالک کے عوام میں قریبی تعلق کو انتہائی گہرائی سے فروغ دینے کےلئے انتہائی اہمیت کا حامل ہے ۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان کے صدر عارف علوی کے نام لکھے گئے ایک خط میں کیا ۔ بلاشبہ پاک چین دوستی لازوال ہے بھارت کے پاس اگر امریکہ کی شکل میں طاقتور اتحادی ہے تو پاکستان کے پاس بھی چین کی شکل میں خطے میں اور سلامتی کونسل میں ایک مضبوط اتحادی موجود ہے جن کے مفادات مشترکہ ہیں ۔ پاکستان اور امریکہ کے تعلقات عشروں کی نچلی ترین سطح پر پہنچ چکے ہیں جس کی وجہ سے پاک چین تعلقات مزید گہرے ہوتے جا رہے ہیں ۔ دونوں ممالک ایک دوسرے کیساتھ دفاعی توانائی اور اقتصادی تعاون کی مضبوظ ڈور سے بندھ چکے ہیں دونوں ممالک کی خارجہ پالیسی کا ایک اہم اصول یہ ہے کہ ایک دوسرے کے مفادات کا تحفظ کیا جائے ۔ قائد اعظم کی مدبرانہ قیادت کے نتیجہ میں ;200;زاد ہونیوالا پاکستان اور ماءوزے تنگ کی عظیم قیادت اور لانگ مارچ کے ثمرات کے نتیجہ میں ;200;زادی حاصل کرنے والا چین محبت اخوت اور باہمی تعاون کیساتھ ایکدوسرے کیلئے لازم و ملزوم ہو چکے ہیں ۔ پاک چین دوستی سے جہاں پاکستان کو غربت، کرپشن، بیروزگاری کے خاتمہ میں مدد ملے گی اور معاشی طور پر مستحکم ہو گاوہیں علاقائی امن ،دہشت گردی کیخلاف مشترکہ کوششوں کو بھی فروغ ملے گا ۔

مہنگائی کاجن بوتل سے باہر

پاکستان کے اپنے ادارہ شماریات نے مہنگائی کے حوالے سے ہفتہ وار رپورٹ جاری کی ہے ۔ ایک ہفتے میں مہنگائی 0;46;96 فیصد بڑھ گئی ۔ گزشتہ ہفتے 20 اشیائے ضروریہ مہنگی ہوئیں ۔ چینی کی قیمتوں میں اضافے کا سلسلہ جاری ہے ۔ حالیہ ہفتے میں چینی اوسط 40 پیسے فی کلو مہنگی ہوئی ۔ چینی کی قیمت 95;46;67 سے بڑھ کر اوسط 96;46;07 روپے کلو ہو گئی ۔ بجلی چارجز 36 پیسے یونٹ بڑھ گئے ۔ ایک ہفتے میں ٹماٹر ڈیڑھ روپے مہنگے ہوئے ۔ ;200;ٹا ;200;لو دودھ دہی چھوٹا اور بڑا گوشت چاول دا چنا دال مسور لہسن گڑ مہنگا ہوا ۔ حالیہ ہفتے کے دوران 9 اشیا کی قیمتوں میں کمی ہوئی ۔ انڈے 9 روپے فی درجن سستے ہوئے ہیں ۔ ایک ہفتے میں پیاز دو روفے کلو سستے ہوئے ۔ دال مونگ تین روپے ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 7 روپے سستا ہوا ۔ حالیہ ہفتے میں 22 اشیا کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔ اس وقت سفید پوش خاندان ضروریات زندگی سے محرومی پر احساس کمتری میں مبتلا نظر ;200;تے ہیں ۔ مہنگائی کی وجہ سے مڈل کلاس ختم ہوکر غریب طبقے میں ضم ہورہی ہے ۔ مہنگائی کی چکی میں پسنے والے عوام قرض کے بوجھ تلے دب چکے ہیں ۔ حکومت نے سہانے خواب دکھائے تھے، ان میں سے کوئی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوا ۔ مہنگائی پر کنٹرول نہ کیا گیا تو عوام کا سونامی سب کچھ بہا لے جائے گا ۔ جوں جوں وقت گزر رہا ہے مہنگائی کاجن بوتل سے باہر آرہا ہے ۔ عوام یہ بات پوچھنے میں حق بجانب ہیں کہ ;200;ج پاکستان جو اربوں ڈالر کا مقروض ہے تو کیا وہ قرضہ غریبوں نے لیا تھا اور گزشتہ تین دہائیوں سے جو غریب پستا چلا ;200;رہا ہے اس کا حساب کون دے گا اور جو حکمرانوں نے ;200;ج تک ملک کو دونوں ہاتھوں سے لوٹاہے اس کا حساب عمران خان غریبوں سے لینا چاہتے ہیں ;200;ج جس طرح مہنگائی کر دی گئی ہے اس سے غریبوں کا کام تو تمام ہو جائے گا ۔ اگر عوام کا ہی خون نچوڑنا تھا تو پھر عوام کو کیوں سبز باغ دکھائے کیوں عوام سے یہ وعدہ کیا کہ نیا پاکستان میں عوام کے مسائل حل ہوں گے ۔ کیونکہ یہ وعدے جو ;200;پ پورے ہی نہیں کر سکتے جنہوں نے اس ملک کو لوٹا ہے اس کا غصہ ;200;ج صرف غریبوں پر نکل رہا ہے ۔ موجودہ مہنگائی سے عام آدمی کاجینادوبھرہوگیا ہے ۔ حکومت کوچاہیے کہ وہ فوری طورپرمہنگائی کم کرنے پرتوجہ دے ۔