- الإعلانات -

پی ڈی ایم کاجلسہ بے وقت کی راگنی

پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ نے ایک مرتبہ پھر بکھرنے کے بعدشہرقائد میں اکٹھی ہوکر حکومت کے خلاف تحریک چلانے کے لئے میدان سیاست میں قدم رکھ دیاہے ۔ جبکہ حکومت یہ کہتی ہے کہ یہ تمام سیاسی بیروزگا ر ہیں صرف پارلیمنٹ سے دوری ان کوستارہی ہے، موجودہ حالات میں ہونایہ چاہیے تھا کہ اس وقت تمام سیاستدان ایک پلیٹ فارم پر ہوتے لیکن شاید ہمارے ملک کی سیاست کی ڈگر ہی ذاتی مفادات پرمبنی ہے ،نہ عوام کاخیال، نہ ملک کاخیال، نہ مسائل کاخیال اورنہ ہی بین الاقوامی حالات کا ادراک، یہ تمام چیزیں ہونا انتہائی ضروری ہیں ۔ حکومت کو بھی تین سال گزرچکے ہیں ،اپوزیشن بھی سوتے سوتے ایک دم جاگتی ہے یہ عمران خان کی خوش نصیبی ہے کہ اس کو اپوزیشن ایسی ملی جس میں دم خم ہی نہیں ۔ اتنے ایشوز اپوزیشن کے ہاتھ آئے مگر یہ کچھ بھی نہیں کرسکی،نہ اپنی کارکردگی دکھاسکی ،نہ ہی حکومت کا احتساب کرسکی ۔ کراچی میں ہونیوالے جلسے کے دوران پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے اسلام آباد کی جانب مارچ کرنے کا اعلان کردیا ہے ۔ کراچی میں جلسہ سے خطاب میں کہا کہ آج دنیا آگے بڑھ رہی ہے لیکن پاکستان کو پیچھے دھکیل دیا گیا ۔ جعلی حکمرانوں نے تین سال میں پاکستان کو غیر محفوظ ریاست بنا دیا ہے ۔ موجودہ حکمرانوں نے پاکستانی قوم کو غیر محفوظ قوم بنا دیا ۔ ملک کی ایسی صورتحال میں خاموش تماشائی بن کر نہیں رہ سکتے ۔ محرم کا مہینہ یہی بتاتا ہے کہ یزید کے ہاتھوں پر بیعت نہیں کرنی ۔ یہ ناجائز حکومت ہے اس کو کوئی عوامی مینڈیٹ حاصل نہیں ۔ پی ڈی ایم اپنا سفر جاری رکھے گی ۔ ملک میں آئین کی حکمرانی کو یقینی بنانا ہوگا ۔ پاکستان کے عوام کو ممتاز مقام دلوا کر دم لیں گے ۔ ملک میں لوگوں کو آٹا، چینی، گیس نہیں مل رہی ۔ موجودہ حکومت کو عوامی مینڈیٹ حاصل نہیں ۔ ہماری ملکی معیشت جمود کا شکار ہے ۔ مہنگائی نے غریب کا جینا دوبھر کردیا ہے ۔ نا اہل اور نالائق حکومت نے معیشت کو تباہ کیا ۔ پاکستان نا اہلوں کےلئے حاصل نہیں کیا ۔ ادویات کی قیمتوں میں بے پنا اضافہ ہو چکا ہے ۔ عمران خان نے ملک کو کہاں پہنچا دیا ہے;238; ۔ لوگو اٹھو انقلاب لاءو ۔ انقلاب کے علاوہ کوئی اور راستہ نہیں ۔ معیشت کمزور ہو تو کامیاب خارجہ پالیسی نہیں بن سکتی ۔ ہم نے چین سے کہا کہ پاکستان کے راستے دنیا کے ساتھ تجارت کرسکتے ہیں ۔ نواز شریف نے سی پیک کا افتتاح کیا ۔ کام شروع ہوا تو عالمی قوتوں کو برداشت نہیں ہوا ۔ ہم نے معاشی ترقی کی بنیاد رکھی ۔ چین کی 70 سال کی دوستی کو معاشی دوستی میں تبدیل کیا ۔ مولانافضل الرحمان کاکہناتھا کہ امریکہ افغانستان میں شکست کو تسلیم کرے ۔ امریکہ اور نیٹو شکست خوردہ قوتیں ہیں ۔ جلسے سے مسلم لیگ(ن)کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا کہ عمران خان نے جھوٹے وعدوں پر عوام کو ٹرخایا جارہا ہے ۔ عمران خان دن رات جھوٹ بولتے ہیں ۔ وہ 350 کنال کے محل میں بیٹھ کر ریاست مدینہ کی باتیں کرتے ہیں ۔ عمران خان قوم کو گمراہ کر رہے ہیں ۔ ;200;ج ملک میں مہنگائی عروج پر ہے ۔ اللہ نے پی ڈی ایم کو موقع دیا تو مہنگائی ختم کر دیں گے ۔ مولانا فضل الرحمن کی قیادت میں لاکھوں کا سمندر لیکر اسلام ;200;باد جائیں گے اور حکومت کو دفن کریں گے ۔ جلسے سے دیگرپی ڈی ایم کے دیگرمقررین نے بھی اپنے خطاب میں حکومت پرشدیدتنقید کی ۔ دوسری جانب وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین نے پی ڈی ایم کے جلسے کے ردعمل میں کہا کہ پی ڈی ایم کا کراچی جلسہ دراصل پیپلز پارٹی کے خلاف تھا، پی ڈی ایم نے صرف شو کیا، اس میں پاور نہیں تھی ۔ بے موسمی جلسوں سے حکومت کو کوئی تشویش نہیں ، اپوزیشن بے وقت کی راگنی الاپ رہی ہے ۔ پی ڈی ایم کے بے موسمی جلسے کرونا وبا کے پھیلاءو کا باعث بنیں گے ۔ وبا کا پھیلا و پر کم ہونے پر اپوزیشن اپنے جلسوں کا شوق پورا کرلے ۔ گزشتہ 3سال میں پی ڈی ایم کی تمام تحریکیں ناکام ہوئیں ۔ پی ڈی ایم اب اپنی کوئی نئی چال چلنا چاہتی ہے تو اپنا شوق پورا کرے ۔ ماضی کی طرح اب بھی ناکامی مقدر ہوگی ۔ جو لوگ عمران خان سے استعفیٰ لینے نکلے تھے وہ کہاں گئے ۔ پی ڈی ایم عملاً ختم ہو چکی ہے ۔

امریکہ کافضائی حملہ،تحمل سے کام لیناہوگا

امریکہ نے کابل میں فضائی حملہ کیا ہے ۔ امریکی عہدیداروں نے خبر ایجنسی سے بات چیت میں بتایا کہ امریکی حملے میں داعش خراسان کے مشتبہ جنگجوں کو نشانہ بنایا گیا ۔ ترجمان طالبان کے مطابق حملے میں خودکش بمبار کی گاڑی کو نشانہ بنایا گیا ۔ خود کش بمبار کابل ایئرپورٹ کو نشانہ بنانا چاہتا تھا ۔ عرب میڈیا کے مطابق پولیس کا کہنا ہے کہ کابل ایئرپورٹ کے شمال مغربی علاقے میں راکٹ حملہ ہوا ہے ۔ راکٹ حملے میں 6 بچوں سمیت 9 افراد جاں بحق ہوئے ۔ راکٹ حملے میں دو گاڑیاں اور مکان کا کچھ حصہ تباہ ہوا ۔ علاوہ ازیں افغانستان کی بدلتی صورتحال کے پیش نظر اقوام متحدہ نے افغانستان میں فوڈ سپلائی کےلئے پاکستان سے مدد طلب کر لی ۔ پاکستان ایک بار پھر بھر پور معاونت کرتے ہوئے پاکستان افغانستان میں فوڈ سپلائی کےلئے مدد کرے گا ۔ عالمی ادارہ خوراک افغانستان میں آپریشن پاکستان سے کرے گا ۔ اس سلسلے میں سول ایوی ایشن اتھارٹی نے آپریشن کرنے کی مشروط اجازت دیدی ۔ امدادی پرواز میں فوجی سامان لے جانا منع ہوگا، عالمی ادارہ خوراک کو فیس ادا کرنی ہوگی، کسی قسم کا اسلحہ اور کیمیکل پرواز میں نہیں جائے گا، امدادی سامان کی تفصیلات دینی ہوگی ۔ طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ کابل میں دو پاکستانیوں کے گرفتار ہونے کی خبر بے بنیاد ہے ۔ انہوں نے مزید لکھا کہ ایسا کوئی واقعہ پیش نہیں آیا اور نہ ہی ترکمانستان کے سفارت خانے کو کوئی خطرہ لاحق ہے ۔ داعش افغانستان میں خطرہ نہیں ، اسلامی امارت کے قیام کے بعد داعش کی موجودگی کا کوئی جواز نہیں بنتا ۔ اگر ایسا نہ ہوا تو انھیں کنٹرول کرنا مشکل نہیں ہوگا،کابل ائیرپورٹ کی حفاظت کیلئے خصوصی دستہ ڈیوٹی سنبھالنے کیلئے تیار ہے،امریکہ اور یورپ کیساتھ اچھے تعلقات کے خواہاں ہیں ۔ طالبان کے امیر شیخ ہیبت اللہ قندھار میں موجود ہیں اور ان کے سامنے حکومت سازی کے حوالے سے تجاویز پیش کی جا رہی ہیں ۔ اسلامی امارت پر اعتراض بلا جواز ہے کیونکہ نظام کا فیصلہ افغانوں نے کرنا ہے نہ کہ دنیا نے ۔

افغان سرحدپارسے فائرنگ، پاک فوج کاموثرجواب

;200;ئی ایس پی ;200;ر کے مطابق افغانستان سے دہشت گردوں نے ضلع باجوڑ میں فوجی چوکی پر فائرنگ کی ۔ پاک فوج کی جانب سے دہشت گردوں کی فائرنگ موثر جواب دیا گیا ۔ فائرنگ کے تبادلے میں پاک فوج کے دو جوان شہید ہو گئے ۔ پاک فوج کی جوابی فائرنگ سے تین دہشت گرد ہلاک اور چار زخمی ہو گئے ۔ شہید ہونے والے اہلکاروں میں سپاہی جمال اور سپاہی ایاز شامل ہیں ۔ پاکستان نے افغان سرزمین سے حملے پر بھرپور احتجاج کیا ہے ۔ وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے باجوڑ میں سرحد پار سے دہشت گردی کی مذمت کی ہے ۔ وزیر داخلہ نے فائرنگ سے پاک فوج کے دو جوانوں کی شہادت پر دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے کہا کہ وطن کیلئے جان قربان کرنےوالے جوانوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں ۔ پاکستان کو بیک وقت بہت سے دشمنوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ ان میں سے کچھ تو پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کے خلاف باہر بیٹھ کر سازشیں کررہے ہیں اور کچھ پاکستان کے اندر رہ کر اس کو نقصان پہنچانے کی کوششوں میں مصروف ہیں ۔ ہماری مسلح افواج اور انٹیلی جنس ادارے ایسے تمام عناصر اور انہیں استعمال کرنےوالے دشمنوں پر نظر بھی رکھے ہوئے ہیں اور ان کی سازشوں کو ناکام بنانے کےلئے ہر لمحہ مصروفِ عمل بھی ہیں ۔ امریکہ اور دیگر ممالک کے پاکستان کے ساتھ مطلوبہ تعاون نہ کرنے کے باوجود پاک فوج نے اپنے وطن کے دفاع اور سلامتی کے اپنے تمام تر وسائل کو بروئے کار لا کر ملک دشمن قوتوں کا بھرپور مقابلہ کیا اور دشمنوں کی تمام سازشوں کو خاک میں ملا دیا ۔ دہشت گردی کے خاتمے اور خطے میں امن و امان قائم کرنے کےلئے پاک فوج نے قربانیوں کی لازوال تاریخ رقم کی، اسی وجہ سے امن دشمن طاقتیں اپنے مذموم مقاصد کےلئے گاہے گاہے سازشیں اور شرارتیں کرتی رہتی ہیں ۔ امن دشمن کارروائیوں کے دوران سکیورٹی فورسز کو نشانہ بنانے کا مقصد خطے میں عدم استحکام پیدا کرنا ہے اور اس سلسلے میں ہمارے ازلی دشمن ہمسایہ ملک بھارت کے منفی کردار کو بھی نظرانداز نہیں کیا جا سکتا