- الإعلانات -

گورنر ،صدر،جنرل اور جسٹس

سند ھ کے گو ر نر جسٹس سعید الز ما ن صد یقی نے حلف اٹھا لیا اور آ رمی چیف ، جنر ل راحیل شر یف نے ان کو مبار ک با دی ۔ سا بق گو رنرعشر ت العبا د گو ر نر ہا ؤ س سے کیا نکلے کہ دبئی پہنچ گئے جہاں سابق صد ر آ صف علی زرداری قبل ازیں آ رام فر ما تھے ! ابھی ا ن کو گو رنر ی سے اتا را ہی نہ گیا تھا ! مگر خبر یں آ نا شر وع ہو گئی تھیں کہ ان کو گو ر نر ی سے ہٹا یا یعنی فا رغ کیا جا رہا ہے ۔ اور نئے گو ر نر جسٹس سعید الز ما ن صد یقی ہو ں گے ! مجھے ایک سا تھی نے مشو رہ دیا کہ عشر ت العبا د کی فرا ر کی را ہ رو کی جا ئے ۔ ہما ری گفتگو ہو تی رہی ۔ کسی نے کہا کہ جلد عشر ت العبا د بھا گ جا ئیں گے ۔ کسی نے کہا کہ عشر ت العبا د پر متعدد قتل کے مقد مات ہیں ۔ ان کا کیا بنے گا ؟ کسی نے کہا کہ عشر ت العبا د کی پشت پر کو نسی طا قت تھی ۔اس کا پتہ چلا یا جا ئے کہ وہ مشر ف ، زردای اور ممنو ن کے دور میں اس عہد ے پر کیسے فا ئز رہے ہیں یا کیاصر ف الطا ف حسین کے خو ف سے ان کو ہر حکومت نے قبو ل کیا تھا ۔ یا وہ اس قد ر قا بل لائق اور باکمال آ دمی تھے کہ ہر حکو مت نے ان کی خد ما ت کے پیش نظر ان کو گو ر نر بنا ئے رکھا ! کہتے ہیں جتنے منہ اتنی با تیں ! با لا خر نتیجہ یہ نکلا کہ عشر ت العبا د متعد د مقد ما ت قتل میں ملزم تھا مگرہر حکمر ان ن الطا ف حسین کی خو شنو دی کی خا طر عشر العبا د کو قبو ل کئے رکھا ! او راب الطا ف حسین کو ایم کیو ایم سے نکا ل با ہر کرکے منفی ایک والا فا ر مو لہ لا گو کر کے الطا ف حسین کو لند ن ایم کیو اہم کا سر برا ہ بنا کر پا کستا نی MQMکو آ زاد کرا لیا گیا ہے! اور ایم کیو ایم پا کستا ن چو نکہ داخلی انتشا ر کا شکا ر ہے اسلئے وفا ق نے صدر ممنو ن حسین کی خوا ہش پر گو ر نر تبد یل کر نے کا اشا رہ دیا ہے ۔ کیو نکہ وفا قی حکو مت اب پہلے سے زیا دہ مضبو ط ہے یہ بھی ممکن ہے MQMپا کستا ن کی بھی کو شش ہو کہ الطا ف حسین کے بنائے گئے مہر ے کو تبدیل کیا جا ئے تا کہ کل یہی گو ر نر الطا ف حسین کا ایجنٹ بن کر ڈاکٹر فا رو ق ستار کی جما ت کو نقصا ن نہ پہنچاسکے ! عشر ت العبا د پر متعدد فوجد اری مقد ما ت تھے ! بلکہ وہ کئی سنگین جر ائم کے مقد ما ت میں بھی ملو ث تھا لیکن ہر دو ر کے حکمر انو ن نے ان جرائم کے حو الے سے کبھی کو ئی با ت نہ کی ! او رجو نہی وہ گور نر ی سے فارغ ہو کرلندن پہنچا حکمر ان جما عت کو اس کے جر ائم و مقد ما ت یا د آ گئے ۔ قوم کی یہ بد قسمتی ہے کہ اس قو م کے حا کم نہ دید ہ قو تو ں کے پسند ید ہ ہو تے ہیں ۔ جیسے جنا ب سا بق صد ر آ صف علی زرداری صا حب جب تک صد ر پا کستا ن تھے ۔ صحت مند بھی رہے اور ملک میں حکمر ان بن کر رہے ۔ اقتدا ر کے سا تھیو ں سمیت خو ب مز لو ٹے او ر جب اقتدا ر سے فا رغ ہو ئے ۔ بیما ر یو ں نے کیا گھیرا کہ پا کستا ن والا گھر ہی بھو ل گئے اور اب شاید ر یٹائر ہو جا ئیں اور قوم پر حکمرا نی پہلے بلا و ل زر داری کو تیا ر کر انے کیلئے اس کے استا دو ں کے حوالے کررہے ہیں ۔ اب زرداری اور پی پی پی کی خواہش ہے کہ قو م کی قیا دت بلا ول زرداری کریں۔ اور کیو ں نہ کر یں ۔ قیا دت ! کیا و ہ جو ان نہیں ؟ کیا وہ پڑ ھے لکھے نہیں ؟ کیا وہ خا ند انی تجر بہ نہیں رکھتے ؟ بینظیر بھٹو نے ملک اور ملت کی قیا دت ! اور دوران قیا دت ، خد مت ان کے حصے میں بھی کچھ نہ کچھ ضر ور آیا ہو گا! آ صف علی زرداری صا حب نے پا نچ سا ل قو م کی قیادت کی ! اور اپو زیشن مسلم لیگ نو از نے کی ! زرداری صا حب نے اپو زیشن کو راضی رکھتے ہو ئے خو ب خد مت کی سا تھیو ں کی ! خو ب مز ے کر نے دیئے ۔ اپنے حوا ر یو ں کو !اپنے کا رو با ر کو وسعت دی اپنے اثا ثے بڑ ھا ئے ۔ اپنے تعلقا ت بڑ ھائے حتیٰ کہ ملک ریا ض سے لاہو ر میں ایک گھر بھی تحفہ میں لیا ۔ اور نہ جا نے انہو ں نے اور ان کے سا تھیو ں دوستو ں رشتہ دارو ں نے کیا کیا تحا ئف انعا م منا فع اور مکا نا ت ، پلا ٹ بنا ئے ! حتیٰ کہ زرداری صاحب پر سر ے محل بنا نے یعنی خر ید نے کے اعتر اضا ت بھی لگے تھے ۔ لیکن لند ن میں سر ے محل کے بعد مے فئیر فلیٹس کی کہا نی منظر عا م پر آ نے کے بعد لو گ سر ے محل کی کہا نی بھول گئے ! زرادری صا حب سر ے محل میں مزے کی زند گی گز اریں یا دبئی پیلس میں آ رام کر یں۔بلاول کو بھی فرا نس یا سو ٹئر لینڈ میں ریٹا ئر منٹ کے بعد محل کی ضر ور یا ت ہو گی ! اور یہ محل حکو مت میں آ نے کے خر ید ے جاتے ہیں۔با ت سند ھ کے نئے گو ر نر کے حوا لے سے شر و ع ہو ئی تھی ! نئے گر و نر عد لیہ فیملی سے ہیں۔ اور کچھ لو گو ں کا خیا ل ہے کہ مو جودہ حکمر ان گھر انہ تجا ر ت میں بڑا ما ہر ہے ۔ اور نئے گو ر نر کا انتخا ب کرکے ا س گھر انے اپنی تجا ر ت کا نیا باب نہ کھو ل دیا ہو ۔ جیسے کہ حکمر ان گھر انے نے ریٹا ئر ڈجنرنیلو ں کو اپنی جما عت میں شامل کر کے حا ضر سر و س جر نیلو ں کواپنی طر ف راغب کر نے کی منصو بہ بندی کی ہے! اسی طر ح ریٹا ئر ڈجج کو کمیشن کا سر بر اہ یا کسی صو بے کے گو ر نر کیلئے ریٹا ئر ڈجج کا لگا کر اعلیٰ عد لیہ کے ججوں کو خر ید نے کی کو شش کی ہو ! جسٹس عا مر رضا اور جسٹس سعید الز ما ن صد یقی کی تقرریو ں سے حکمر ان خا ند ان کی تجارتی مہا رت