- الإعلانات -

پنجاب میں غیر ملکی سرمایہ کاری کے بہترین مواقع

پنجاب میں غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم تیزی سے بڑھ رہا ہے۔ پنجاب حکومت سرمایہ کاروں اور صنعت کاروں کو ہر ممکن سہولیات فراہم کر رہی ہے تاکہ معیشت تیزی سے ترقی کی منازل طے کر سکے۔ پنجاب حکومت صوبہ میں سرمایہ کاری اور کاروبار کرنے والے اداروں کو خصوصی مراعات دے رہی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ پچھلے 2 برسوں میں پنجاب میں سرمایہ کے حجم اور انڈسٹری کی تنصیب میں ریکارڈ اضافہ ہے ۔مختلف ممالک نے پنجاب میں سرمایہ کاری اور انڈسٹری کی تنصیب میں خاصی دلچسپی لی ہے جن میں سرفہرست چائینہ ، ترکی اور کوریا ہیں ۔گزشتہ روز پنجاب سرمایہ کاری بورڈکے زیر اہتمام ’’پنجاب میں سرمایہ کاری کے مواقعوں ‘‘کے موضوع پر بین الاقوامی سیمینارمنعقد ہوا جسمیں 26 ممالک کے 450 مندوبین شریک ہوئے۔ وزیراعلیٰ شہبازشریف نے پنجاب سرمایہ کاری بورڈکے زیر اہتمام ’’پنجاب میں سرمایہ کاری کے مواقعوں ‘‘کے موضوع پر بین الاقوامی سیمینارکے افتتاحی سیشن سے خطاب میں کہا کہ اللہ تعالیٰ نے چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈورکی شکل میں پاکستان کو ایک انعام اورآگے بڑھنے کا سنہری موقع عطا کیا ہے اوراب اس سے فائدہ اٹھانا ہم سب کی قومی ،سیاسی ،ملی اوردینی ذمہ داری ہے۔ سی پیک نا امیدی کو امید اورمایوسیوں کوخوشیوں میں بدلنے کا عظیم منصوبہ ہے۔ ہمیں محنت، عزم اورجذبے کام کرتے ہوئے اسے کامیاب بناناہے، یہ ہماری ذمہ داری بھی ہے اورفرض بھی۔سی پیک پر تیزرفتاری سے عملدر آمدپر چین سمیت پوری دنیا معترف ہے۔ اس منصوبے پرکامیابی سے عملدر آمد پر دوست خوش اورمخالفین حیران اور پریشان ہیں۔سی پیک کے بارے میں وہ آوازیں بھی دب چکی ہیں جو اسے مہنگے کمرشل قرضے کہتے تھے۔یہ قرضے نہیں بلکہ چین کی سرمایہ کاری ہے۔ وزیراعلی نے کہا کہ خوشحالی اورترقی کے سفر میں سب شامل ہوسکتے ہیں۔ چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈور چین کے صدر کے اسی ویژن کاپھل ہے جس سے سب سے پہلے پاکستان کے عوام فائدہ اٹھائیں گے۔ چینی قیادت بھی سمجھتی ہے کہ موجودہ پاکستانی قیادت صحیح معنوں میں سی پیک کی محافظ ہے۔ سیاسی و عسکری قیادت اورپوری قوم ملک کو مکمل طورپر دہشت گردی کی لعنت سے پاک کرنے کیلئے پرعزم ہے۔دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاک افواج، پولیس، قانون نافذ کرنے والے اداروں کے افسروں، جوانوں، بچوں اور اہم شہریوں نے لازوال قربانیاں دی ہیں۔ انشاء اللہ دہشت گردی کے خلاف جنگ جیتیں گے اور پاکستان کوامن کا گہوارہ بنائیں گے۔ چین کے سابق سفارتکارشازوکانگ نے خطاب میں کہا کہ پاکستان اورچین کی دوستی بے مثال ہے۔ شہبازشریف چین کے عظیم دوست ہیں اوران کی محنت سے دونوں ممالک میں معاشی تعاون بڑھا ہے۔ پنجاب کے وزیراعلیٰ کی شبانہ روزکی محنت سے پنجاب میں بے مثال ترقی کی ہے اورپنجاب پاکستان کاترقی یافتہ اور خوشحال صوبہ بن چکا ہے۔ ہمیں پاکستان اور پاکستان کے عوام کی دوستی پر فخر ہے۔سی پیک پاکستان کی ترقی و خوشحالی کاعظیم منصوبہ ہے اورچین اورپاکستان اس کی کامیابی کیلئے پرعزم ہیں۔چینی قونصل جنرل لانگ ڈنگ بن نے کہا کہ چین پاکستان سے تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے اور پنجاب کے وزیراعلیٰ نے دونوں ممالک کے معاشی تعاون بڑھانے میں اہم کردارادا کیا ہے۔ شہبازشریف کی مضبوط قیادت کے باعث پنجاب میں سرمایہ کاری میں اضافہ ہوا ہے اوراس سیمینار میں 300چینی سرمایہ کار شرکت کررہے ہیں۔ترک قونصل جنرل سردارڈینز نے کہا کہ وزیراعلیٰ نے پنجاب کے عوام کی بھر پورخدمت کی ہے اورعوام کو سہولتوں کی فراہمی کیلئے شاندار کام کیا ہے۔ متعدد ترک کمپنیاں پنجاب حکومت کے ساتھ ملکرکام کررہی ہیں اور آنے والے وقتوں میں مزید ترک سرمایہ کاری پنجاب میں سرمایہ کاری کریں گے۔ صدر پاک ترک بزنس قونصل نے کہا کہ پاکستان کی ابھرتی ہوئی معیشت ہے اوروزیراعظم نوازشریف کی قیادت میں پاکستان کی معیشت مضبوط ہوئی ہے اورپاکستان اورترکی کے مابین معاشی تعاون بڑھا ہے۔ ملک و قوم کی خوشحالی کے اس عظیم منصوبے کی کامیابی کیلئے پوری قوم کو یکسو ہوکر آگے بڑھنا ہے اورمحنت،امانت اوردیانت کے سنہری اصولوں کو اپنا کراپنی منزل حاصل کرنا ہے۔ ملک کو اپنے پاؤں پر کھڑا کرنے اورخودکفالت کی منزل سے ہمکنارکرنے کیلئے سیاستدانوں، ججوں، جنرنیلوں، بیورو کریٹس، صنعتکاروں اورتاجروں کوماضی کی غلطیوں اورتاریخ سے سبق سیکھ کر آگے بڑھنا ہے اورپاکستان کو قائدؒ و اقبالؒ کے تصورات کے مطابق فلاحی ریاست بنانے کیلئے اپنا کردارادا کرنا ہے۔ سیمینار کے دوران برطانیہ کے سرمایہ کاروں کی جانب سے فیصل آباد میں مکمل ہونے والے 70 ملین یورو کے منصوبے کا افتتاح کیا گیا۔غیر ملکی سرمایہ کار کمپنیوں نے پنجاب کے مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری کرنے پر گہر ی دلچسپی کا اظہار کیااورتوانائی، انفراسٹرکچر، ٹرانسپورٹ، صنعت، زراعت، شہری ترقی، ہاؤسنگ، صحت اور دیگر شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق کیاگیا۔غیر ملکی سرمایہ کاری کیلئے اس قسم کے سیمینار اور نمائشیں بہت ضروری ہیں مگر صرف پنجاب ہی نہیں بلکہ دوسرے صوبوں کو بھی ایسی تقلید کرنی چاہیے تاکہ پاکستان میں سرمایہ کاری کو فروغ ملے اور پاکستان مجموعی طورپر ترقی کرے۔خیبر پی کے، سندھ اور بلوچستان میں بھی سرمایہ کاری کے بہت سے مواقع موجود ہیں ، صرف ان کو استعمال میں لانے کی ضرورت ہے۔ ہم الحمد اللہ دہشت گردی کے خوفناک ماحول سے باہر نکل آئے ہیں اب غیر ملکی سرمایہ کاروں کیلئے بہت سے مواقع ہیں کہ وہ پاکستان میں محفوظ سرمایہ کاری کر کے نہ صرف پاکستان بلکہ خطے میں معاشی استحکام کے فروغ کیلئے کام کریں۔