- الإعلانات -

میں منافق نہیں ۔۔۔۔!

یہ صرف ہمارے ملک کا ہی نہیں دنیا بھر کا مسئلہ ہے ۔چاپلوسوں،کینہ پروروں،دروغ گوئی کرنے والوں اور غیبت گوئی کرنے والوں نے تباہی پھیلائی ۔ملک کے ملک تباہ کرا دئیے کیونکہ جب کوئی اقتدار یا اختیارات میں ہوتاہے تو اس کی ترجیحات ہی مختلف ہوتی ہیں ۔ایک مخصوص ٹولے نے گھیر رکھا ہوتا ہے جو اصل خبر اس تک پہنچنے ہی نہیں دیتا ۔سب اچھا ،سب اچھا کی رپورٹ تباہی وبربادی تک پہنچا دیتی ہے ۔بالکل اسی طرح ہوتا ہے جیسے رنگیلا شاہ کو اس کے وفادار سب اچھا کی رپورٹ دیتے رہے مگر جب دشمن محل میں داخل ہوا تو اس نے کہا کہ اب کم از کم مجھے بھاگنے کیلئے جوتے ہی دے دو مگراس وقت تک تخت سے اٹھنے میں بہت دیر ہوچکی تھی اور دشمن بھی اس کو دبوچ چکا تھا ۔وزیرداخلہ چوہدری نثار نے گذشتہ روز پریس کانفرنس کرکے ملک کا اورخصوصی طورپر وزیراعظم کا انتہائی اہم مسئلہ حل کردیا ۔انہوں نے کہا کہ میں نے ہمیشہ سچی ،کھری اورصحیح بات کی اورشاید اسی وجہ سے میں کچھ ایسے لوگوں کو ناپسند تھا جنہوں نے وزیراعظم کے گرد گھیرا ڈال رکھا ہے ۔چوہدری نثار نے واضح کردیا کہ وہ منافق نہیں ۔ملک اور قوم کے مفادمیں جو بھی فیصلہ کیا اس پر وہ قائم رہے اور وہی رائے وزیراعظم کودی ۔انہوں نے کہا کہ میں نے کبھی بھی وزیراعظم کو یہ نہیں کہا کہ واہ ،واہ آپ کاجلسہ بڑا کمال کا تھا ،آپ نے یہ کردیا ،آپ نے وہ کردیا ۔ہمیشہ حقائق سے آگاہی کرائی اور نوازشریف نے بھی اس بات کو پسند کیا یہ مسئلہ صرف حکمرانوں کے ساتھ نہیں اس ملک کے ہر سرکاری اورنجی ادارے کا مسئلہ ہے ۔بس کچھ لوگ اپنی نوکریاں بچانے کیلئے ایسے ایسے مشورے دیتے رہتے ہیں کہ ان سے تو انسان صرف الاماں الاماں ہی کرسکتا ہے ۔کسی کو بھی قربانی کا بکرا بنانے کیلئے اس پرچھرا پھیرا دیا جاتا ہے اورخود غیبت ودروغ گوئی کرکے بچ نکلتے ہیں مگر ایسے لوگوں کا وقت بہت زیادہ نہیں ہوتا ۔اس ناچیز نے اپنی آنکھوں سے ایسی شخصیات کو دیکھا ہے جو اندر بیٹھ کر واہ ،واہ کرتے تھے ۔غلط خبریں دیتے تھے ،کبھی کسی کو ملازمت سے فارغ کرانا ،کسی کو سیاست سے باہر کرانا ،کسی کے حق میں ناحق اور غلط فیصلہ کرانا مگر اللہ کی لاٹھی کی بڑی بے آواز ہوتی ہے ۔حق تلفیاں کرنے والوں کی پھر وہ مٹی ذلیل ہوتے دیکھی کہ انہیں اس کے بعد جگہ نہ ملی ۔جس کو سب اچھا کی رپورٹ دے کر واہ ،واہ حاصل کرتے تھے اسی نے انہیں دو ٹکے کا کرکے باہر کھڑا دیا۔اس وقت ایسے خوشامدیوں کے ساتھ شاید ان کا سایہ بھی نہیں ہوتا دیگر ساتھیوں کا ساتھ دینا تو درکنار ہے ۔تاہم وزیرداخلہ نے ایک بات بڑی کڑوی اورسچ کہی کہ میں تو سیاست سے باز آیا ۔اگرکوئی مجھ سے یہ کہے کہ مجھے وزارت داخلہ یا کوئی عہدہ چاہیے ہے تو میں اس کا کبھی بھی متمنی نہیں ہوں گا کیونکہ مجھے میرا حلقہ اورعوام بے حد پسند ہیں لیکن آج میں ممبر قومی اسمبلی سے بھی استعفیٰ دینے کا فیصلہ کرکے آیا تھا تاہم ابھی کچھ چند دنوں کے بعد میڈیا سے کھل کر بات کروں گا ۔کیونکہ ن لیگ میں اس وقت سب سے زیادہ سینئرترین آدمی میں ہوں ۔ہر قسم کی دھوپ اورچھاؤں دیکھی ،مگر کل کے آنے والوں نے وزیراعظم کو گھیر رکھا ہے ۔میں تو اب بھی وزیراعظم کو ایک مشورہ دوں گا کہ اگر فیصلہ حق میں آتا ہے یا خلاف آتا ہے دونوں صورتوں میں اسے تسلیم کرنا چاہیے اور حق میں آجاتا ہے تو آپ کو بہت سارے لوگ ایسے مشورے دیں گے کہ اس کا سر قلم کردیں تو آپ قطعی طور پرایسا نہ کریں اوردرگزر سے کام لیں ۔آپ کو صبروتحمل کا مظاہرہ کرنا ہوگا ۔پارٹی کو قائم ودائم رکھیں میں کسی آوارہ ٹرین کا سوار نہیں ہوں۔پچھلی صفوں میں آپ کے ساتھ رہوں گا ۔میاں صاحب آپ وہ واحد خوش نصیب ترین سیاستدان ہیں جس کو قوم نے بہت کچھ دیا ۔وقت یہ تقاضا کررہا ہے کہ ہم اداروں میں ہم آہنگی رکھیں ۔شاید میری تلخ باتیں بہت سے لوگوں کو ناپسند ہونگی لیکن حقیقت یہی ہے جو میں نے ہمیشہ وزیراعظم سے بیان کی ۔نامعلوم کیا ایسی وجوہات تھیں کہ ڈیڑھ ماہ سے میں کسی بھی مشاورت میں شریک نہیں رہا ۔چوہدری نثارکی پریس کانفرنس کے پیچھے ایک انتہائی کرب اوردرد ناک سیاسی گردوغبار اورطوفان معجزن ہے ۔ہم تو یہاں یہ کہیں گے کہ ان کے سینے میں شاید ڈان لیکس سے بھی زیادہ راز معجزن ہیں ۔مگر چونکہ چوہدری صاحب رکھ رکھاؤوالے آدمی ہیں اس وجہ سے انہوں نے کچھ دوستیوں کا ’’مان‘‘ رکھا ۔مگر شاید کچھ دنوں کے بعد وہ کچھ اور ایسی باتیں میڈیا سے کریں جو آنے والے دنوں کے لیے سیاست کے مستقبل کی منزل کا تعین کریں ۔اس بات میں ہم بھی چوہدری نثار سے متفق ہیں کہ وزیراعظم نوازشریف کو اگرکبھی کسی نے نقصان پہنچایا تووہ ان کی ’’کچن کیبنٹ ‘‘ہی رہی ۔آج کا دن پاکستان کی تاریخ میں انتہائی اہمیت کا حامل ہے جب تک میرے قارئین کرام یہ الفاظ پڑھ رہے ہوں گے تو فیصلے کی آمد آمد ہوگی ہر کوئی یہ تجزیہ کررہا ہے کہ کیا فیصلہ آئیگا ،کون جائیگا ،کون رہے گا ۔ہم تو صرف یہی کہیں گے کہ تمام تر حالات دیکھ لیں ۔جانے والے کو پتہ ہے وہ جارہا ہے ۔لہذا تمام فریقین کو واویلا مچانے سے کیا حاصل ہوگا ۔