- الإعلانات -

شاہ صاحب! یہ قوم واقعی احمق ہے

khalid

خورشید شاہ صاحب ! یقین رکھیے ہم واقعی احمق ہیں۔ یہ پوری کی پوری قوم واقعی احمق ہے۔ یہ احمق قوم آپ کی باتوں کا مطلب قطعی نہیں سمجھ پائے گی۔ آپ بالکل بجا فرما رہے ہیں کہ وفاقی حکومت سندھ اور پیپلز پارٹی کو نشانہ بنا رہی ہے ۔ اس قوم کو آپ کی اس بات کا بھی کماحقہ یقین ہے یہ وفاقی حکومت ہی ہے جو رینجرز نے جو اچھے کام کیے ہیں ان پر بھی پانی پھیر رہی ہے۔ یہ جو رینجرز کے اختیارات ختم ہوئے اور اس کے بعد ان میں توسیع نہیں ہو کر نہیں دے رہی، اس میں آپ کی پیپلز پارٹی کا تو کوئی قصور ہی نہیں، معاملہ سندھ اسمبلی میں گھسیٹنے کی جو کوشش کی جا رہی ہے یہ بھی وفاق ہی کا کیا دھرا ہے، سندھ حکومت کا اس میں کیا دوش۔ رینجرز کے اختیارات ختم ہوئے اورجو ڈاکٹر عاصم طوطے کی طرح بول رہا تھا اور ہر الزام قبول کر رہا تھا، یہی نہیں بلکہ عدالت کے سامنے بھی اپنے اوپر لگائے گئے تمام الزامات کا اعتراف کر چکا تھا، اسے راتوں رات سندھ پولیس نے بے گناہ قرار دے ڈالا، یہ احمق قوم بالکل بھی نہیں سمجھ سکتی کہ یہ کیا ہو رہا ہے، قوم جانتی ہے کہ یہ بھی وفاقی ہی کا کیا دھرا ہے، آپ کی پیپلز پارٹی کا بھلا اس میں کیا قصور۔ بالکل آپ نے بجا فرمایا کہ آپ تو چاہتے ہو کہ کرپشن کے خلاف آپریشن ہو مگر وفاقی حکومت نہیں ہونے دے رہی، رینجرز کو توسیع نہیں دے رہی، پولیس کی کالی بھیڑوں کے ذریعے ڈاکٹر عاصم کو بے گناہ قرار دلوا چکی ہے۔ وہ تو شاہ صاحب آپ کے اور اس قوم کی خوش نصیبی کہ نیب آڑے آ گیا ورنہ ڈاکٹر عاصم صاحب تو اب تک بیرون ملک پدھار چکے ہوتے اور آصف زرداری کے پہلو نشیں ہو چکے ہوتے۔ ہاں یاد آیا یہ جو آصف علی زرداری ملک واپس نہیں آ رہے اور ان کی ”بیماری“ اس قدر طویل ہوتی جا رہی ہے اس کے پیچھے بھی وفاقی حکومت ہی کا ہاتھ ہے، یہ آپ کو کہنے کی بھی ضرورت نہیں، یہ قوم پہلے ہی جانتی ہے۔ قوم جانتی ہے کہ پیپلز پارٹی کتنی معصوم ہے اور مسلم لیگ ن کتنی مکار اور چالاک۔ یہ احمق قوم جانتی ہے کہ وہ جو ایان علی پکڑی گئی تھی، لاکھوں ڈالرز کے ساتھ، وہ ڈالرز بھی وفاقی حکومت ہی کے تھے۔ اور شاہ جی آپ نے تو وفاقی حکومت کی سینہ زوری ملاحظہ فرمائی ہو گی کہ اپنی ہی پارٹی کے ایک وکیل کو اس کی وکالت پر نامزد کر دیا اور پھر انکار بھی کرتی رہی کہ ہمارا ایان علی سے کوئی تعلق نہیں۔کس طرح اس وفاقی حکومت نے راستے کے سب سے بڑے کانٹے”انسپکٹر اعجاز“ کو ہٹایا ، کس طرح اس کے معصوم بچوں کو یتیم کر دیا اور آج ایان علی آزاد ہے۔ اس وفاقی حکومت کو کون نہیں جانتا شاہ جی، یہ ہے ہی ایسی ظالم کہ فرعون و شداد کی مثالیں اس کی فتنہ گریوں کے سامنے ماند پڑ رہی ہیں۔اس وفاقی حکومت کا کیا کیا ظلم گنواﺅں۔ آصف علی زرداری سے ہوتے ہوئے براستہ محترمہ فریال تالپورجو بات لیاری کے دہشت گردوں تک پہنچ رہی ہے، اس کی بھی قوم کو کوئی سمجھ نہیں آ رہی۔ محترمہ فریال تالپور پاکستان کے نامور بدمعاشوں بلکہ دہشت گردوں کو اپنا بیٹا قرار دیتی رہی ہیں یہ بات بھی ان کے منہ میں مسلم لیگ ن ہی نے ڈالی تھی۔ یہ جو پیپلز پارٹی ہی کے چشم و چراغ اور آصف علی زرداری کے سب سے قریبی دوست ذوالفقار مرزا”بونگیاں“ مار رہے ہیں یہ بھی ان سے مسلم لیگ ن ہی کروا رہی ہے۔ شاہ صاحب! آپ کو ایک اندر کی بات بتاﺅں؟ آپ کو یقینا علم نہ ہو گا کہ یہ جو مسلم لیگ ن ہے ناں، یہ پیپلزپارٹی اور اس کے رہنماﺅں پر کالا جادو کروا رہی ہے،اسی لیے ان یہ دھڑادھڑ پیپلز پارٹی کو چھوڑ رہے ہیں اور پھر اپنی ہی پارٹی قیادت کے خلاف ایسی بونگیاں مارنے لگ جاتے ہیں۔ یہ سلسلہ ناہید خان اور صفدر عباسی سے شروع ہوا تھا اور اب صمصام بخاری اور اشرف سوہنا تک آپہنچا ہے۔ آپ تو خود سید بادشاہ ہیں، اس کالے جادو کا کوئی توڑ ڈھونڈیں۔ ہاں یاد آیا، وہ آصف علی زرداری کے جو ”باواجی“ ہیں، وہی پیر اعجاز صاحب، ان سے ہی اس کا کوئی حل کروا دیکھیں، شاید بات بن جائے۔ قوم اس مشکل گھڑی میں آپ کے ساتھ کھڑی ہے، ڈٹ جائیے اس سازشی مسلم لیگ ن کے خلاف۔ یقین رکھیے یہ قوم احمق ہے، یہ بالکل بھی نہیں سمجھے گی کہ آپ آصف زرداری اور اپنے دیگر پارٹی رہنماﺅں کی کھربوں کی کرپشن، دہشت گردوں کی معاونت، چائنہ کٹنگ وغیرہ وغیرہ پر نہیں ڈٹے ہوں گے،یقین رکھیے، قوم یہی سمجھے گی کہ آپ مسلم لیگ ن کی سازشوں کے خلاف ڈٹے ہوئے ہیں، یہ مسلم لیگ ن ہے ہی ایسی شرپسند۔