- الإعلانات -

ممتاز اداکار دلیپ کمار کو 18 سال پرانے مقدمے میں بری کر دیا گیا ہے

برصغیر کے ممتاز اداکار دلیپ کمار کو ایک 18 سال پرانے مقدمے میں بری کر دیا گیا ہے۔

یہ چیک باؤنس کا مقدمہ تھا اور 94 سالہ دلیپ کمار عدالت میں حاضر نہیں تھے۔

بھارتی میڈیا  کے مطابق یہ کیس در اصل کولکتہ کی کمپنی ’جی کے ایکزم انڈیا پرائیوٹ لمیٹڈ‘ کے خلاف تھا جس کے دلیپ کمارسنہ 1998 میں ’اعزازی چیئرمین‘ تھے۔

ان کے علاوہ تین ڈائرکٹروں کے خلاف مقدمہ قائم کیا گیا تھا۔ مقدمے کی سماعت میں دلیپ کمار کے علاوہ ایک دوسرے ڈائرکٹر کو چیک باؤنس کی ذمے داری سے بری کر دیا گیا ہے جبکہ دو دوسرے ڈائرکٹروں کو قصور وار ٹھہرایا گيا ہے۔

گذشتہ روز دلیپ کمار کی اہلیہ اور اپنے زمانے کی معروف اداکارہ سائرہ بانو نے کئی ٹویٹ کے ذریعے دلیپ کمار کے مداحوں سے اداکار کی صحت کے متعلق دعا کی اپیل کی تھی اور کہا تھا کہ ’اعصابی مسائل کے باوجود انھوں نے کبھی مقدمے کو موخر کرنے کی درخواست نہیں دی۔‘

تاہم انھوں نے مقدمے کی تفاصیل ظاہر نہیں کی تھی۔