- الإعلانات -

ہندو اداکارائیں زائرہ وسیم سے سبق سیکھیں، ہندو رہنما

بولی وڈ اداکارہ زائرہ وسیم نے 2 دن قبل سوشل میڈیا کے ذریعے فلم انڈسٹری کو خیرباد کہنے کا اعلان کرکے سب کو حیران کیا تھا۔

زائرہ وسیم نے 5 سال قبل عامر خان کی فلم ’دنگل‘ سے محض 13 برس کی عمر میں کیریئر کا آغاز کیا تھا اور وہ انتہائی کم عمری میں مشہور ہوگئی تھیں۔

زائرہ وسیم نے اعتراف کیا کہ انہیں کم عمری میں شہرت ملی اور انہیں فلم انڈسٹری سے اچھا پیار بھی ملا اور انہوں نے اچھا مقام بھی حاصل کیا۔

تاہم اداکارہ نے بتایا کہ انہیں اب احساس ہونے لگا ہے کہ وہ اس کام کے لیے نہیں تھیں اور یہ کہ اداکاری کی وجہ سے ان کا ایمان و عقیدہ متاثر ہو رہا ہے، اس لیے اب وہ فلم انڈسٹری سے کنارہ کشی کر رہی ہیں۔

زائرہ وسیم کے اعلان کے بعد اگرچہ کئی بولی وڈ شخصیات نے حیرانگی کا اظہار کرتے ہوئے اداکارہ کے فیصلے کو غلط قرار دیا، تاہم متعدد شخصیات نے ان کی حمایت بھی کی اور کہا کہ وہ اپنی مرضی سے زندگی گزارنے کا حق رکھتی ہیں۔

اگرچہ زائرہ وسیم کے مینیجر نے یہ دعویٰ بھی کیا تھا کہ بولی وڈ چھوڑنے کا اعلان خود اداکارہ نے نہیں کیا بلکہ ان کے سوشل میڈیا اکاؤنٹس ہیک کرکے ہیکرز نے یہ اعلان کیا تھا۔

تاہم بعد ازاں زائرہ وسیم نے اپنی انسٹاگرام اسٹوری میں وضاحت کی کہ ان کا کوئی بھی سوشل میڈیا اکاؤنٹ ہیک نہیں ہوا۔

زائرہ وسیم کی جانب سے فلم اںڈسٹری چھوڑے جانے پر جہاں ہندو سیاستدان اور اداکار پریشان دکھائی دیے اور انہوں نے اداکارہ کو مذہب کی بنیاد پر انڈسٹری چھوڑنے پر تنقید کا نشانہ بنایا۔

وہیں ایک بھارتی ہندو انتہاپسند سیاستدان نے زائرہ وسیم کے فیصلے کی حمایت کرتے ہوئے ہندو اداکاراؤں کو ان سے سبق سیکھنے کا درس دیا۔

سیاسی جماعت ’اکھل بھارتیہ ہندو مہاسبھا‘ (اے بی ایچ ایم) کے صدر سوامی چکرپانی نے زائرہ وسیم کی تصویر ٹوئیٹ کرکے ہوئے ان کے بولی وڈ چھوڑنے کے فیصلے کی تعریف کی۔

سوامی چکرپانی نے ہندی میں ٹوئیٹ کرتے ہوئے بولی وڈ میں کام کرنے والی ہندو اداکاراؤں کو مسلمان اداکارہ سے سبق لینے اور ان کی طرح اعلان کرنے پر بھی اکسایا۔

ہندو انتہاپسند سیاستدان کا کہنا تھا کہ زائرہ وسیم کا فلم اںڈسٹری کو چھوڑنے کا فیصلہ قابل تعریف ہے اور اسی طرح ہندو اداکاراؤں کو بھی کرنا چاہیے۔

اگرچہ سوامی چکرپانی نے براہ راست ہندو اداکاراؤں کو یہ مشورہ نہیں دیا کہ وہ بھی اپنے عقیدے اور ایمان کو محفوظ بنانے کی خاطر بولی وڈ چھوڑنے کا اعلان کریں، تاہم انہوں نے انہیں مشورہ دیا کہ وہ زائرہ وسیم کے فیصلے سے سبق سیکھیں۔

زائرہ وسیم نے سوشل میڈیا کے ذریعے بولی وڈ چھوڑنے کا اعلان کیا تھا—فوٹو: فلم فیئر
زائرہ وسیم نے سوشل میڈیا کے ذریعے بولی وڈ چھوڑنے کا اعلان کیا تھا—فوٹو: فلم فیئر