- الإعلانات -

شرمین عبید نے معیاری فلم بنا کر ایوارڈ حاصل کیا‘ توقیر ناصر

اسلام آباد :  پاکستان میں فلم اور ڈرامہ سے وابستہ اداکاروں نے شرمین عبید چنائے کو دوسری مرتبہ آسکر ایوارڈ جیتنے پر خوشی و مسرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ دوسری مرتبہ عالمی ایوارڈ جیتنا تاریخی کارنامہ ہے جس پر وہ مبارکباد کی مستحق ہیں ۔ ڈرامہ آرٹسٹ توقیر ناصر نے اے پی پی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شرمین کو ایوارڈ ملنا اعزاز کی بات ہے اور ہم اس کی اہمیت کو تسلیم کرتے ہیں۔ بعض لوگ اس پر تنقید کر رہے ہیں جو انکا حق ہے لیکن تنقید اتنی نہیں ہوئی چاہئے کہ جس سے ان کی حوصلہ شکنی ہو۔ شرمین نے معیاری دستاویزی فلم بنا کر ایوارڈ اپنے نام کیا ہے ۔ جس پر وہ مبارکباد کی مستحق ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بین الاقوامی سطح پر پاکستان کا مثبت تشخص اجاگر کرنے کی اشد ضرورت ہے اور ایسے موضوعات پر بھی فلمیں بننی چاہیں جن کے بارے میں لوگوں کو تنقید کا موقع نہ ملے ۔ اداکار جمال شاہ کا کہنا ہے کہ شرمین عبید باصلاحیت پاکستانی خاتون ہیں جنہوں نے دو سری مرتبہ آسکر ایوارڈ جیت کر ملک و قوم کا نام روشن کیا ہے ۔دو مرتبہ آسکر ایوارڈ ملنا ان کی صلاحیتوں کا اعتراف ہے ۔ شرمین نے انتہائی حساس موضوع پر فلم بنائی ہے اسطرح کے موضوعات پر فلمیں بننی چاہئیں اور معاشرے کی خرابیوں کو اجاگر کرنا چاہئے کیونکہ برائیوں کی نشاندہی کئے بغیر معاشرے کو ان سے پاک نہیں کیا جا سکتا ۔ شرمین نے دونوں فلمیں جن موضوعات پر بنائی ہیں ان کے حوالے سے آگہی کا ضرورت ہے تاکہ لوگوں میں شعور اجاگر ہو اورایسے عناصر کی حوصلہ شکنی ہو۔ ڈرامہ آرٹسٹ سہیل اصغر نے بھی شرمین عبید کو ایوارڈ جیتنے پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے انتہائی عمدہ فلم بنا کر ایوارڈ اپنے نام کیا ہے ۔ بلا شعبہ یہ پاکستان کیلئے اعزاز کی بات ہے کہ یہاں کی خاتون نے دنیا کا بہتر ایوارڈ اپنے نام کیا ہے ۔ سہیل اصغر نے کہا کہ غیرت کے نام پر قتل ایسی برائی ہے جو پاکستان سمیت دنیا کے کئی معاشروں میں پائی جاتی ہے جس کی جتنی بھی مزمت کی جائے کم ہے کیونکہ کسی بھی صورت میں ایک زندہ انسان کا قتل نہیں ہونا چاہئے۔ ڈائریکٹر نوماد آرٹ گیلری نگین حیات کا کہنا ہے کہ شرمین نے ایوارڈ جیت کر تاریخ رقم کی ہے وہ پہلی پاکستانی خاتون ہیں جنہیں یہ اعزاز حاصل ہوا ہے ۔ بلاشبہ یہ پاکستان کی تمام خواتین کیلئے قابل فخر بات ہے ۔ سترنگ آرٹ گیلری کی عاصمہ راشد خان کا کہنا ہے کہ غیرت کے نام پر قتل کے موضوع پر فلم بنانا اور پھر آسکر ایوارڈ جیتنا اعزاز کی بات ہے جس پر شرمین عبید مبارک باد کی مستحق ہیں۔ ٹیلی ویژن آرٹسٹ تسنیم خان اور انعم خان نے بھی شرمین عبید کو ایوارڈ جیتنے پر مبارک باد دیتے ہوئے امید ظاہر کی ہے کہ وہ مستقبل میں بھی ایسی فلمیں بنا کر ملک و قوم کا نام روشن کرتی رہیں گی۔ واضح رہے کہ شرمین عبید چنائے کو فلم ”اے گرل ان دی ریور“ پر آسکر ایوارڈ ملا ہے اس سے قبل وہ فلم سیونگ فیس پر بھی آسکر ایوارڈ حاصل کر چکی ہیں شرمین اپنی دستاویزی فلموں کے لئے حساس موضوعات کا ہی انتخاب کرتی ہیں