- الإعلانات -

پولینڈ میں اندھے ، بہرے ڈرائیوروں کی انوکھی کار ریس

کار ریسنگ کمزور دل کے مالک افراد کے بس کی بات نہیں اور اگر آپ اندھے یابہرے ہو ں تو اس کاتصور کرنا بھی مشکل ہے ۔مگر پولینڈ میں ایک ایسی انوکھی ریس ہوئی جس میں صرف اندھے و بہرے ڈرائیورز نے شرکت کی ۔یہ ریس وسطی پولینڈ کے لوڈز ایئر پورٹ میں ہوئی جس میں 19 اندھے اور بہرے ڈرائیورز نے شرکت کی۔اس ریس کو ٹی پی جی ڈیف بلائنڈ ریس کا نام دیا گیا تھا۔دلچسپ بات یہ ہے کہ ان 19 ڈرائیورز میں سے 12 نے اس سے پہلے کبھی کوئی گاڑی نہیں چلائی جبکہ دیگر 7 نے یہ تجربہ اس وقت کیا تھا جب وہ بنیائی سے محروم نہیں ہوئے تھے ۔ریس کے منتظمین کے مطابق کچھ تو مکمل طور پر اندھے اور بہرے تھے اور جو کچھ تھوڑا بہت سن یا دیکھ سکتے تھے انہیں بھی سیاہ غلاف پہنا دیئے گئے تاکہ برابری کی سطح پر مقابلہ ہو۔30سالہ کمیلاڈو برزینسکا نامی خاتون ڈرائیور نے یہ ریس جیتی جو بینائی سے محروم ہیں انہوں نے 50 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گاڑی بالکل درست انداز سے چلائی۔