- الإعلانات -

مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کیلئے حکومت پاکستان کا کرتارپور پر گانا ریلیز

Share
حکومت پاکستان نے مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کے لیے سکھوں کے مقدس ترین مقامات میں سے ایک گردوارا بابا گرو نانک دیو صاحب پر فلمائے گئے بھارتی اداکارہ کے گیت کو ریلیز کردیا۔

گردوارا بابا گرو نانک دیو صاحب جی پاکستانی پنجاب کے ضلع نارووال میں شکر گڑھ کے علاقے میں دریائے راوی کے مغربی جانب واقع ہے۔یہ مقام سکھ برادری کے لیے مقدس ترین مقامات میں سے ایک ہے اور پاکستان نے نومبر 2019 میں اس مقام کو بھارتی زائرین کے لیے آسان بنانے کے لیے کرتارپور راہداری بھی کھول دی تھی۔کرتارپور راہداری کے ذریعے بھارتی سکھ زائرین ویزا کے بغیر ہی بھارت سے پاکستان داخل ہوکر اپنے مقدس ترین مقامات میں سے ایک کی زیارت کرتے ہیں۔حکومت پاکستان نے کرتارپور راہداری کا سنگ بنیاد ستمبر 2019 میں رکھا تھا جب کہ نومبر 2019 میں اسے عام زائرین کے کھول دیا گیا تھا۔کرتارپور راہداری کھلنے کے بعد سکھ برادری کے ہزاروں زائرین زندگی میں پہلی بار ویزا اور دیگر مشکلات کے بغیر پاکستان میں اپنے مذہبی مقدس مقام پر پہنچے تھے۔

کرتارپور راہداری کے ذریعے ہی بھارتی سکھ زائرین گردوارا گرو نانک پہنچتے ہیں—فائل فوٹو: اے ایف پی
کرتارپور راہدری کو کھولنے کے بعد جہاں سکھ افراد نے پاکستانی حکومت کی تعریف کی تھی، وہیں دنیا بھر میں پاکستان کے اس قدم کو مذہبی ہم آہنگی کے فروغ اور اقلیتوں کے حقوق کے حوالے سے دیکھا گیا تھا۔ اور اب حکومت پاکستان نے کرتارپور راہدری کھولے جانے کو ایک سال مکمل ہونے پر مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کے لیے گیت جاری کردیا۔ ریڈیو پاکستان کی رپورٹ کے مطابق وزارت اطلاعات و نشریات کی جانب سے مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کے لیے بھارتی اداکارہ و گلوکارہ کا گیت جاری کیا گیا۔

وزارت اطلاعات کے الیکٹرانک میڈیا پبلی کیشن ڈائریکٹوریٹ کی جانب سے جاری کردہ گانے میں بھارتی تامل اداکارہ پونم کور اور ان کے اہل خانہ کو گردوارا بابا گرو نانک دیو صاحب کی زیارت کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔گانے میں سکھ زائرین کو کرتارپور راہداری کے راستے پاکستان میں داخل ہوکر اپنے مقدس مذہبی مقام کی زیارت کرتے وقت جذباتی انداز میں بھی دکھایا گیا ہے۔