- الإعلانات -

بچوں کا جنسی استحصال کرنے والے ‘حیوان’

اگرچہ ماضی میں بھی پاکستانی ڈراموں میں بچوں کے ساتھ ہونے والی ناانصافیوں، ان کے اغوا اور تشدد کے حوالےسے ڈرامے بنائے گئے ہیں، تاہم جلد ہی بچوں کے جنسی استحصال پر مبنی ایک منفرد ڈرامہ بھی ریلیز ہونے والا ہے۔

حال ہی میں ‘میری گڑیا’ نامی ڈرامہ بھی آن ایئر ہوا، جس میں پنجاب کے شہر قصور میں رواں برس کے آغاز میں اغوا کے بعد جنسی ذیاتی کا نشانہ بنائے جانے کے بعد بیہمانہ قتل کیے جانے والی ننھی زینب کے واقعے کو بھی پیش کیا گیا۔

تاہم جلد ہی نجی ٹی وی چینل ‘اے آر وائی ڈیجیٹیل’ پر ‘حیوان’ نامی منفرد ڈرامہ بھی آن ایئر کیا جائے گا۔

ہدایت کار مظہر معین کے ڈرامے ‘حیوان’ کو آئی ڈریم انٹرٹینمنٹ پروڈکشن نے پروڈیوس کیا ہے، جس میں یہ دکھایا جائے گا کہ والدین کس طرح اپنے بچوں کی حفاظت کو یقینی بناسکتے ہیں۔

ڈرامے میں بچوں کے اغوا، ان کے اچانک گم ہوجانے اور پھر انہیں جنسی استحصال کا نشانہ بنائے جانے جیسے موضوعات کو دکھایا جائے گا۔ ڈرامے کی کہانی ایک ایسے خاندان کے گرد گھومتی ہے، جس کی کم عمر بچی اچانک غائب ہوجاتی ہے۔

پر اسرار طور گم ہوجانے والی بچی کے والد کا کردار فیصل قریشی جب کہ والدہ کا کردار سویرا ندیم ادا کرتی نظر آئیں گی، علاوہ ازیں صنم چوہدری اس بچی کی بڑی بہن کے روپ میں نظر آئیں گی۔

فیصل قریشی کے مطابق ڈرامے کے ذریعے یہ دکھانے کی کوشش کی گئی ہے کہ کس طرح والدین کی ذرا سی لاپرواہی انہیں زندگی پر پچھتاوے میں مبتلا رکھتی ہے۔

سارہ سوین سید کے لکھے گئے ڈرامے کو رواں برس 10 اکتوبر سے اے آر وائی ڈیجیٹل پر نشر کیا جائے گا۔