انٹر ٹینمنٹ

تاپسی پنوں نئی کوئین قرار دیئے جانے پر کنگنا رناوت سے ڈر گئیں؟

ممبئی: بالی ووڈ اداکارہ تاپسی پنوں کا شماران اداکاراؤں میں ہوتا ہے جوہر موضوع پر کھل کر اپنے خیالات کا اظہار کرتی ہیں تاہم ان کے حال ہی میں کنگنا رناوت سے متعلق دئیے گئے بیان نے ان کے مداحوں کو چونکادیا۔

اداکارہ تاپسی پنوں نے پچھلے کچھ عرصے میں اپنے کام سے خود کو منوایا ہے ان کے کام کی بدولت ان کے مداحوں نے ان کا موازنہ بالی ووڈ میں کوئین کے نام سے مشہور اداکارہ کنگنارناوت سے کرتے ہوئے انہیں بالی ووڈ کی نئی کوئین قرار دے دیا۔

تاہم اداکارہ تاپسی پنوں نے فوراً ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا، ارے ایسا مت بولیں، کوئین ان کو(کنگنارناوت کو) ہی رہنے دیں، نہیں تو پھر کاپی کہلاؤں گی، میں ایک اداکارہ ہی ٹھیک ہوں بس آپ لوگ ایسے ہی میراساتھ دیتے رہیں۔ شکریہ۔

واضح رہے کہ کچھ عرصہ قبل کنگنا رناوت کی بہن رنگولی چینڈل نے تاپسی پنوں کو کنگنا رناوت کی سستی کاپی قراردیاتھا جس پر تاپسی نے کوئی بھی ردعمل ظاہر کیے بغیر کہا تھا کہ ان کے پاس ان چیزوں پر بات کرنے کے لیے وقت نہیں ہے۔

’24 سال کی عمر میں ماں بننا زندگی کا سب سے دانشمندانہ فیصلہ’

بولی وڈ اداکارہ اور سابق مس یونیورس سشمیتا سین نے 24 سال کی عمر میں ماں بننے کو ‘اپنی زندگی کا سب سے دانشمندانہ فیصلہ’ قرار دیا ہے۔

سشمیتا سین نے اس عمر میں 2 بچیوں رینی اور علیشا کو گود لیا تھا اور اب ان کا کہنا ہے ‘اس فیصلے نے میری زندگی کو مستحکم کیا، لوگ سوچتے ہیں کہ یہ فلاحی کام اور بہت اچھا اقدام تھا مگر یہ ذاتی تحفظ کے لیے تھا، اس نے خود مجھے تحفظ فراہم کیا، اپنے دل کے کہنے پر چلنا ہمیشہ اس بات کو یقینی بناتا ہے کہ آپ درست سمت میں گامزن ہیں’۔

انہوں نے مزید کہا ‘ہاں یہ سچ ہے کہ 24 سال کی عمر میں ایسا کرنا کافی مشکل تھا کیونکہ اس وقت میں کیرئیر کے عروج پر تھی، ایک اداکارہ کے طور پر یہ چیلنجنگ کام تھا، اس وقت آپ خود میں گم ہوتے ہیں اور کامیابی کی وجہ سے خود پر غرور بھی ہوتا ہے۔ مگر مجھے اپنی 24 سال کی ذات پر فخر ہے کیونکہ میں چاہتی تھی تو بچیوں کو گود لینے کے عمل کو التوا میں ڈال سکتی تھی اور نظر انداز کرسکتی تھی، مگر میں نے ایسا نہیں کیا، اس کا کریڈٹ میں لیتی ہوں’۔

سشمیتا سین کا کہنا تھا کہ وہ ایسی ہی ماں ہیں جو بچوں کو جنم دیتی ہے ‘قدتی پیدائش میں ماں اور بچہ ایک دوسرے سے جڑے ہوتے ہیں، مگر گود لینے پر ماں اور بچے ایک زیادہ بڑی طاقت سے جڑ جاتے ہیں، وہ تعلق جو آپ کاٹ نہیں سکتے۔ مجھے یہ تجربہ دو بار ہوا اور مجھے ایک دن بھی ماں کی زندگی کے لطف سے محروم نہیں ہونا پڑا’۔

خیال رہے کہ سشمیتا سین نے اگرچہ شادی نہیں کی، تاہم انہوں نے 2 بچوں کو گود لے رکھا ہے، انہوں نے سب سے پہلے 2000 میں ایک بچی اور بعد ازاں 2010 میں دوسری بچی کو گود لیا۔

سشمیتا سین نے 1996 میں فلم ’دستک’ سے بولی وڈ کیریئر کا آغاز کیا، اب تک وہ 40 کے قریب فلموں میں نظر آ چکی ہیں۔

انہوں نے فلم فیئر، آئیفا، اسٹار اسکرین اور زی سائنے سمیت متعدد ایوارڈ اپنے نام کیے ہیں۔

سشمیتا سین نے 1994 میں مس انڈیا کا اعزاز اپنے نام کیا تھا، جس کے بعد وہ اسی برس مس یونیورس بھی منتخب ہوئی تھیں۔

بھارتی پابندیوں سے مجھ پر کوئی فرق نہیں پڑا، عاطف اسلم

کراچی: عالمی شہرت یافتہ پاکستانی گلوکار عاطف اسلم کا بھارتی پابندی کے حوالے سے کہنا ہے کہ پابندی کی وجہ سے ان پر کوئی خاص فرق نہیں پڑا۔

حال ہی میں ایک انٹرویو کے دوران نامور پاکستانی گلوکار عاطف اسلم نے پہلی بار بھارتی حکومت کی جانب سے پاکستانی فنکاروں پر پابندی کے خلاف بات کی۔ میزبان کی جانب سے پوچھے جانے والے سوال کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان خراب تعلقات کی وجہ سے بالی ووڈ تو تقریباً بند ہوگیا ہے لہٰذا اس کی وجہ سے آپ کی زندگی، کام اور آمدنی پر کتنا اثر پڑا ہے؟

عاطف اسلم نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ ان کی آمدنی کا بڑا ذریعہ بھارتی فلم انڈسٹری نہیں بلکہ ہمیشہ سے ان کے کنسرٹ تھے۔ عاطف اسلم  نے خدا کا شکر ادا کرتے ہوئے کہا کہ میرے کنسرٹس ابھی بھی چل رہے ہیں اور میں حال ہی میں نیروبی سے شو کرکے واپس آیاہوں اوراب موریشیس جانے کا ارادہ ہے۔ لہذا بھارتی پابندی کی وجہ سے  مجھ پر اور میری آمدنی پر کوئی خاص فرق نہیں پڑا۔

عاطف اسلم نے بھارتی میوزک کمپنی کی جانب سے اپنے گانے ہٹائے جانے کے حوالے سے کہا کہ میں بھارت میں جس کمپنی کے ساتھ کام کررہاتھا اس نے کچھ ہی عرصے بعد اپنی ویب سائٹ پر میرا گانا اپ لوڈ کردیاتھا۔

واضح رہے کہ پلوامہ حملے کے بعد بھارت نے روایتی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے تمام پاکستانی فنکاروں پر پابندی عائد کردی تھی۔ تاہم اس پابندی کے خلاف سب سے زیادہ بھارت سے ہی آوازیں اٹھیں اور سونونگم سمیت متعدد فنکاروں نے اپنی حکومت کے اس اقدام پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ جب پابندی لگانی ہوتی ہے تو پاکستان سے فنکاروں کو بلایاہی کیوں جاتاہے۔

اداکار ببو برال کی بیٹی کا شوہر پر تشدد کا الزام

لاہور: اداکار ببوبرال کی بیٹی مریم برال نے اپنے شوہر ساقی خان کے خلاف مبینہ تشدد کے الزام میں مقدمے کے اندراج کے لیے درخواست جمع کرادی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق پاکستان کے نامور مزاحیہ اداکار مرحوم ببو برال کی 20 سالہ بیٹی مریم برال نے لاہور کے تھانہ اقبال ٹاؤن میں اپنے شوہر ساقی خان کے خلاف اندراج مقدمہ کے لئے درخواست جمع کروائی ہے۔ درخواست میں مریم نے اپنے شوہر پر الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ ساقی خان ان پر تشدد کرتا ہے اور تشدد کے باعث وہ اپنا نومولود بیٹا بھی گنوا بیٹھی ہے۔ جب کہ تشدد کی وجہ سے ان کے چہرے اور بازو پر تشدد کے نشانات بھی آئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انہیں درخواست موصول ہو گئی ہے جس پر قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

واضح رہے کہ مریم اور ساقی خان کی شادی پچھلے سال مارچ کے مہینے میں ہوئی تھی۔ ساقی خان نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں کام کرتا ہے۔

ماہرہ اور مہوش دونوں کو اداکاری نہیں آتی، نادیہ خان بھی میدان میں کود پڑیں

کراچی: اداکارہ و میزبان نادیہ خان نے اداکارہ ماہرہ خان اور مہوش حیات کی اداکاری پر سوال اٹھاتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے نزدیک نہ تو ماہرہ خان کو اداکاری آتی ہے اور نہ ہی مہوش حیات میں اداکارانہ صلاحیتیں ہیں۔

گزشتہ ایک ہفتے سے پاکستان کے سینئر اداکار فردوس جمال کا ماہرہ خان سے متعلق بیان کہ ’وہ نہ تو اچھی اداکارہ ہیں اورنہ ہی اچھی ہیروئن‘ نے سوشل میڈیا پر طوفان مچایا ہوا ہے۔ اور اب اداکارہ و میزبان نادیہ خان کا بیان بھی سوشل میڈیا پر گردش کررہا ہے جس میں انہوں نے ماہرہ خان  اور مہوش حیات دونوں کو اداکاری کی فہرست سے خارج کردیا۔

اداکارہ نادیہ خان نے حال ہی میں ایک شو میں شرکت کی جہاں میزبان احسن خان نے ان سے کہا کہ وہ اداکارہ ماہرہ خان، صبا قمر اورمہوش حیات ان تینوں کو اداکاری کے حوالے سے کون سے نمبر پر رکھیں گی، جس کے جواب میں نادیہ نے کہا کہ وہ پہلے نمبر پر صباقمر کو رکھیں گی پھر اقرا عزیز کو، جب کہ ان کے نزدیک اداکارہ ماہرہ خان اورمہوش حیات کو اس فہرست میں شامل ہی نہیں کرنا چاہئے تھا کیونکہ ان دونوں کو اداکاری نہیں آتی۔

میزبان احسن خان نادیہ خان کا جواب سن کر حیران رہ گئے کیونکہ مہوش حیات کی اداکاری پر آج تک کسی نے سوال نہیں اٹھایا، یہ پہلی بار ہے کہ نادیہ خان نے انہیں بھی اداکاری کی فہرست سے خارج کردیا۔

ماں کا کردار کرچکی اب نانی دادی کا کردار کرنا چاہتی ہوں، ماہرہ خان

کراچی: پاکستانی سپر اسٹار ماہرہ خان نے سینئر اداکار فردوس جمال کی تنقید کے جواب میں کہا ہے کہ وہ ماں کا کردار اداکرچکی ہیں اور اب ان کا منصوبہ نانی، دادی اور پرنانی کے کردار کرنے کا ہے۔

اداکارہ ماہرہ خان اورسینئر اداکار فردوس جمال کا تنازع ہر گزرتے دن کے ساتھ شدت اختیار کرتاجارہا ہے۔ فردوس جمال کے ماہرہ خان کے بارے میں تبصرے نے سوشل میڈیا پر آگ لگائی ہوئی ہے۔

جہاں ماہرہ خان کے مداح مسلسل اپنی پسندیدہ اداکارہ کی حمایت میں تبصرے کررہے ہیں وہیں اداکار فردوس جمال کے چاہنے والے بھی ان کا دفاع کرتے ہوئے کہہ رہے ہیں کہ ہر انسان کی اپنی رائے ہوتی ہے اوریہ اس کا حق ہوتا ہےکہ وہ کسی بھی بارے میں آزادانہ اپنی رائے کا اظہار کرے۔

اداکارہ ماہرہ خان فردوس جمال کے اس تبصرے پر اپنا ردعمل دے چکی ہیں تاہم اسی حوالے سے ان کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ وہ ماں کا کردار پہلے ہی کرچکی ہیں اور اب تو وہ نانی، دادی بلکہ پرنانی کے کردار ادا کرناچاہتی ہیں۔

ماہرہ خان نے کہا کہ میں اس طرح کے موضوعات پر کچھ بھی کہنے کے بجائے خاموشی اختیار کرنا پسند کرتی ہوں لیکن میں ایک بات کہنا چاہتی ہوں کہ میری حمایت میں جس طرح پوری انڈسٹری باہر آئی میں اس کے لیے شکر گزار ہوں۔

فردوس صاحب کے تبصرے کے بارے میں بات کرتے ہوئے ماہرہ نے کہا کہ ماں کا کردار تو میں ڈراما سیریل’’ہمسفر‘‘میں نبھاچکی ہوں اور آگے بھی اگر موقع ملا تو نبھاؤں گی، بلکہ میں تو اس انڈسٹری میں اتنا کام کرنا چاہتی ہوں کہ نانی، دادی اور پرنانی کے کردار اداکرسکوں۔

شلپا شیٹھی 13 سال بعد بڑے پردے پر جلوے دکھائیں گی

گزشتہ ماہ خبر سامنے آئی تھی کہ ’دھڑکن‘ گرل شلپا شیٹھی جلد ہی 12 سال کے وقفے کے بعد بڑی اسکرین پر واپسی کر رہی ہیں۔

خبریں تھیں کہ شلپا شیٹھی ایک دہائی سے زائد عرصے کے بعد ایکشن کامیڈی فلم کے ذریعے فلموں میں واپسی کریں گی۔

یہ اطلاعات بھی تھیں کہ شلپا شیٹھی اداکار دلجیت دسانج اور یمی گوتم کے ساتھ نئی فلم میں جلوے دکھاتی دکھائی دیں گی۔

تاہم اب خبر سامنے آئی ہے کہ اداکارہ کامیڈی فلم نہیں بلکہ ایکشن کرائم فلم کے ذریعے بولی وڈ میں واپسی کریں گی۔

شلپا شیٹھی نے اپنے انسٹاگرام پر بھارتی اخبار میں فلموں میں واپسی سے متعلق اپنی خبر شیئر کرتے ہوئے تصدیق کی کہ وہ 13 سال بعد بڑے پردے پر دکھائی دیں گی۔

شلپا شیٹھی نے انسٹاگرام پوسٹ میں لکھا کہ اگرچہ فلم کی مکمل کاسٹ کا اعلان ہونا باقی ہے، تاہم ان کے ساتھ ’نکما‘ میں ابھیمنیو دسانی اور شرلی ستیا بھی دکھائی دیں گی۔

اداکارہ نے اپنے کردار کے حوالے سے بتایا کہ وہ پہلی بار ایک منفرد کردار میں دکھائی دیں گی اور انہیں فلم میں کام کرنے کا بے حد انتطار ہے۔

رپورٹس ہیں کہ ’نکما‘ کو شبیر خان پروڈیوس کریں گے اور اس فلم کے حوالے سے جلد ہی مزید ٹیم اور تفصیلات کا اعلان کیا جائے گا۔

ممکنہ طور فلم کو آئندہ برس کے وسط تک ریلیز کیا جائے گا۔

فلموں میں واپسی پر اداکاری نے خوشی کا اظہار کیا—فوٹو: انسٹاگرام
فلموں میں واپسی پر اداکاری نے خوشی کا اظہار کیا—فوٹو: انسٹاگرام

یوں شلپا شیٹھی کی کوئی بھی فلم 13 سال بعد ریلیز ہوگی، ان کی آخری فلم 2007 میں ریلیز ہوئی تھی۔

اگرچہ شلپا شیٹھی 3 سال قبل ریلیز ہونے والی کامیڈی فلم ’ڈشکیوں‘ میں بھی مختصر کردار میں نظر آئیں تھیں، تاہم انہیں فلم کی مرکزی کاسٹ کے طور پر گزشتہ ایک دہائی سے زائد عرصے سے نہیں دیکھا گیا۔

شلپا شیٹھی آخری بار بطور مرکزی اداکارہ 2007 میں ریلیز ہونے والی فلم ’اپنے‘ اور ’لائف ان میٹرو‘ میں دکھائی دیں تھیں اور دونوں فلموں نے کوئی اچھی کمائی نہیں کی تھی۔

تاہم ’لائف ان میٹرو‘ کی کہانی کو بہت سراہا گیا تھا۔

شلپا شیٹھی نے اپنی آخری فلم کے 2 سال بعد 2009 میں صنعت کار راج کندرا سے شادی کرلی تھی اور پھر وہ فلموں میں دکھائی نہیں دیں۔

شلپا شیٹھی کے ہاں 2012 میں بچے کی پیدائش ہوئی، جس کےبعد وہ ٹی وی پر ریئلٹی شوز میں دکھائی دینے لگیں اور بعض فلموں میں مہمان اداکارہ کے طور پر دکھائی دیں۔

تاہم اب وہ 13 سال بعد بطور مرکزی اداکارہ فلم میں کام کرتی دکھائی دیں گی۔

شلپا شیٹھی شادی کے بعد فلموں میں کم دکھائی دیں—فوٹو: انسٹاگرام
شلپا شیٹھی شادی کے بعد فلموں میں کم دکھائی دیں—فوٹو: انسٹاگرام

پشتو اور اردو کے معروف گلوکاروں کے 12 ملی نغموں پر مبنی البم تیار

پشاور: خیبر پختونخوا کے معروف گلوکاروں نے پشتو اور اردو کے ملی نغموں پر مبنی البم امن اور دوطن مینہ پیش کردیا۔

اس حوالے سے باقاعدہ تقریب رونمائی پشاور پریس کلب میں ہوئی جس کے مہمان خصوصی صوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی تھے۔ اس موقع پر ملی نغموں کے گلوکار ثناء تاجک، ہمایوں خان، بختیار خٹک، کرن خان اور زیک آفریدی نے بھی شرکت کی۔

پچاس لاکھ روپے کی لاگت سے بنائے گئے ملی نغموں پر مبنی البم میں لیلی خان اور نصیر آفریدی نے آواز کا جادو جگایا ہے۔ معروف پشتو گلوکار بختیارخٹک نے  بتایا کہ محکمہ ثقافت اور صوبائی حکومت کے تعاون سے پچاس لاکھ کی خطیر رقم سے 12 گانے صوبہ خیبر پختونخوا کے مختلف قبائلی اضلاع خیبر، وزیرستان  اور سوات کے خوبصورت مقامات پر فلم بند کئے گئے ہیں۔

Google Analytics Alternative