- الإعلانات -

وفاقی وزیر مشاہد اللہ خان مستعفی ہو گئے

Mushahid

میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے دھرنوں کے حوالے سے متنازعہ بیان دینے والے وفاقی وزیر ماحولیات مشاہد اللہ خان نے اپنا استعفیٰ وزیر اعظم کو بھجوا دیا ہے۔ وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید نے میڈیا کو بتایا ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف نے وفاقی وزیر کو مالدیپ سے واپس بلوا کر ان سے وضاحت مانگی ہے۔ وفاقی وزیر واپس آ کر وزیر اعظم کو اپنے بیان کے حوالے سے وضاحت پیش کریں گے۔ خیال رہے کہ مشاہد اللہ خان کی جانب سے برطانوی نشریاتی ادارے کو دیے جانے والے ایک انٹرویو میں الزام لگایا گیا تھا کہ انہوں نے ایک ایسی ٹیپ کے بارے میں سنا ہے جس میں آئی ایس آئی کے سابق سربراہ دھرنے کے دوران کچھ لوگوں کو گڑ بڑ پھیلانے کی ہدایات دے رہے تھے۔ وزیر اعظم کی جانب سے یہ ٹیپ آرمی چیف کو سنوائے جانے کے بعد جنرل ظہیر نے اس بات کا اعتراف کیا کہ آواز ان کی ہی ہے۔ وفاقی وزیر نے یہ الزام بھی لگایا کہ آئی ایس آئی کے سابق سربراہ اقتدار پر قبضہ کرنا چاہتے تھے۔