- الإعلانات -

شمالی وزیرستان: فضائی حملوں میں پچاس عسکریت پسند ہلاک

pakistan-airstrike

قبائلی علاقے شمالی وزیرستان میں فضائی حملوں کے نتیجے میں کم از کم 50 مشتبہ عسکریت پسند ہلاک ہوگئے۔ آئی ایس پی آر کے مطابق یہ حملے پیرکی صبح دس بجے زوئی ناری، لتاکا، مزیر مداخیل اور شوال کے علاقوں میں کیے گئے۔ انہوں نے بتایا کہ جیٹ طیاروں کی شیلنگ سے عسکریت پسندوں کے چھ ٹھکانے بھی تباہ ہوئے جبکہ علاقے میں موجود 50 عسکریت پسند بھی مارے گئے جن میں کچھ غیر ملکی بھی شامل ہیں۔ ایک اور افسر نے ہلاکتوں کی تصدیق کی تاہم ان سے جب پوچھا گیا کہ یہ کارروائی کیا گزشتہ روز پنجاب کے وزیر داخلہ شجاع خانزادہ کے قتل کے نتیجے میں کی گئی تو انہوں نے تبصرہ کرنے سے انکار کردیا۔ یاد رہے کہ سیکیورٹی فورسز نے گزشتہ روز بھی شمالی وزیرستان میں کارروائی کی تھی جس کے نتیجے میں 40 مبینہ عسکریت پسند مارے گئے تھے۔ وفاق کے زیرِ انتظام پاک افغان سرحد پر واقع شمالی وزیرستان سمیت سات قبائیلی ایجنسیوں کو عسکریت پسندوں کی محفوظ پناہ گاہ سمجھا جاتا ہے۔ فوج کا کہنا ہے کہ شمالی وزیرستان آپریشن کے آخری مرحلے کا آغاز کردیا گیا ہے جس کے دوران طالبان عسکریت پسندوں کو علاقہ بدر کردیا جائے گا۔ علاقے میں آزاد میڈیا کی رسائی نہ ہونے کی وجہ سے تمام تر تفصیلات آئی ایس پی آر کی جانب فراہم کی جاتی ہیں۔