- الإعلانات -

طالبان کا عدالت پر حملہ چیف جسٹس سمیت 12زخمی

کابل افغان حکومت سے برسرپیکار طالبان نے غزنی شہر میں ایک عدالت پر حملہ کر د یا جس میں 5افراد جبکہ فورسز کی جوابی کارروائی میں 5عسکریت پسند مارے گئے۔
تفصیلات کے مطابق طالبان عسکریت پسندوں نے افغان شہر غزنی میں ایک عدالت پر دھاوا بول دیا جس کی اطلاع ملتے ہیں سکیورٹی فورسز کی بھاری نری موقع پر پہنچ گئی جس کے بعد حکومتی فورسز اورباغیوں میں تصادم شروع ہوگیا ۔طالبان اور سکیورٹی فورسز میں ہونے والی اس جھڑپ میں پانچ جنگجوؤں سمیت 10افراد ہلاک اور چیف جسٹس سمیت ایک درجن سے زائدا فراد زخمی ہو گئے۔
جرمن نشریاتی ادارے نے غزنی پولیس کے سربراہ امین اللہ امرخِیل کے حوالے سے کہا ہے کہ پہلے ایک خودکش بمبار نے عدالت کے گیٹ پر دھماکا کیا، جس کے بعد دیگر چار حملہ آور اند رگھسنے میں کامیاب ہوگئے اور فائرنگ کرنا شروع کر دی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق عسکریت پسندوں پر قابو پانے کیلئے افغان سکیورٹی فورسز موقع پر پہنچ گئیں اس موقع پر ہونے والی جھڑپ میں 4باقی چار حملہ آور بھی مارے گئے۔
خیال رہے کہ افغان صدر اشرف غنی کی حکومت کا تختہ الٹنے کے لیے برسرپیکار طالبان کا یہ حملہ ان کے اس اعلان کے چند روز بعد سامنے آیا ہے، جس میں انہوں نے کہا تھا کہ وہ گزشتہ مہینے چھ طالبان کو پھانسی دیے جانے کا بدلہ لیں گے۔