- الإعلانات -

ہمارےملک میں تھانوں کی بولیاں لگتی ہیں،چیف جسٹس پاکستان

چیف جسٹس پاکستان جسٹس انور ظہیر جمالی نے کہا ہے کہ جس ملک میں رہ رہے ہیں وہاں تھانوں کی بولیاں لگتی ہیں ۔باتیں تو بہت کچھ ہیں لیکن ہم کہہ نہیں سکتے ہم بات کریں تو میڈیا میں خبریں لگ جاتی ہیں۔
چیف جسٹس پاکستان نے یہ ریمارکس بلوچستان کے سابق وزیر خوراک اسفندیار کاکڑ کی نیب ریفرینس میں عبوری ضمانت کی درخواست کی سپریم کورٹ میں سماعت کے دوران دیے ۔چیف جسٹس انور ظہیر جمالی اور جسٹس طارق پرویز پر مشتمل بنچ نے درخواست کی سماعت کی ۔ اسفند یار کاکڑنے اپنے دلائل میں کہا کہ نیب نے جونیئر کلرک کی کرپشن میں وزیر کو شامل کر لیا ، کل نیب چیف جسٹس ہائی کورٹ کے خلاف مقدمہ بنا دے گا کہ سیشن جج ہنگو نے کرپشن کی۔

جونیئر کلرک کی کرپشن میں وزیر کو شامل کرنا عجب تماشا ہے ۔ اس پر سپریم کورٹ نے اسفندیار کاکڑکی درخواست کو برقرار رکھتے ہوئے سماعت اگست کے دوسرے ہفتے تک ملتوی کر دی