- الإعلانات -

اٹلی میں زلزلے سے 37 افراد ہلاک، درجنوں زخمی

روم: اٹلی میں 6.2 شدت کے زلزلے نے ملک کے وسطی علاقوں میں بڑے پیمانے پر تباہی مچادی اور مختلف حادثات میں کم از کم 37 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو چکے ہیں۔

امریکن جیولوجیکل سروے کے مطابق اٹلی کے وسطی علاقے میں آنے والے 6.2 شدت کے زلزلے کا مرکز جنوب مشرقی شہر پیروگیا سے 76 کلو میٹر دور تھا اور زمین میں اس کی گہرائی 10 کلو میٹر تھی۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق اٹلی میں آنے والے زلزلے سے کم از کم 37 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو چکے ہیں جب کہ متعدد دیہات بھی ملبے ڈھیر بن چکے ہیں۔

اٹلی میں آنے والے زلزلے سے سب سے زیادہ وسطی پہاڑی علاقے متاثر ہوئے، اومبریا کے علاقے میں نورشیا کے قصبے میں کئی عمارتیں مبلے کا ڈھیر بن گئیں اور درجنوں افراد اب بھی ملبے تلے دبے ہوئے ہیں جس کی وجہ سے ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔ زلزلے کے بعد تودے گرنے سے متاثرہ کئی دیہات کا زمینی رابطہ شہروں سے منقطع ہو گیا جس کی وجہ سے امدادی کاموں میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

اٹالین حکام نے زلزلے کو شدید نوعیت کا قرار دیتے ہوئے متاثرہ علاقوں میں ایمرجنسی نافذ کردی اور عوام کو محفوظ مقامات پر منتقل ہونے کی ہدایت کر دی ہے، زلزلہ اتنا شدید تھا کہ اس کے جھٹکے 150 کلومیٹر دور دارالحکومت روم میں بھی محسوس کئے گئے۔