- الإعلانات -

ائیرہوسٹسز کو مسافروں کی کچھ ناپسندیدہ باتیں .

لندن:  اگر آپ ہوائی جہاز سے سفر کرتے رہتے ہیں یا عنقریب سفر کرنے والے ہیں تو یہ جان لیجئے کہ کچھ مسافروں کو ائیرہوسٹسز بہت ناپسند کرتی ہیں اور اس کی بنیادی وجہ ان مسافروں کی کچھ ناپسندیدہ باتیں ہیں، اور ائیرہوسٹسز چاہتی ہیں کہ اگر آپ میں بھی یہ عادات ہیں تو براہ کرم انہیں جلد از جلد بدل لیں۔ جریدے ’ہفنگٹن پوسٹ‘ نے دنیا بھر کی ائیرلائنوں کی ائیرہوسٹسز سے بات کی تو ان میں سے ہر ایک نے مسافروں کی ایک ناپسندیدہ ترین عادت کے بارے میں بتایا۔ وہ کیا عادات ہیں کہ جو ائر ہوسٹسز چاہتی ہیں کہ آپ فوراً تبدیل کر لیں، آئیے ائر ہوسٹسز کی زبانی ہی سنئے۔ * فیصلے میں تاخیر نہ کریں، کچھ مسافر تو یہ فیصلہ کرنے میں ہی گھنٹہ لگادیتے ہیں کہ وہ کون سا ڈرنک پئیں گے، یا کیا کھائیں گے۔ * سیٹ کی پچھلی پاکٹ میں کچرہ مت چھوڑیں، ہمیں ہر 10 منٹ بعد اسے صاف کرنا پڑتاہے۔ * کچھ آرڈر کرنے سے پہلے ہیڈ فون ضرور اتارلیں، آپ ہیڈ فون کی وجہ سے ہم پر چلاتے سنائی دیتے ہیں۔ * پلیز جہاز میں ننگے پاؤں مت چلیں۔ * آپ ہمیں بلانے کیلئے نرمی سے ’ایکسکیوزمی‘ کہہ سکتے ہیں، ہاتھ سے چھونا یا یونیفارم پکڑ کر کھینچنا بہت ہی برا محسوس ہوتاہے۔ * آپ کے پاس دوران پرواز بہت وقت ہوتا ہے، پھر آپ عین لینڈنگ سے پہلے واش روم جانے کیلئے کیوں اٹھ کھڑے ہوتے ہیں۔ * کچھ مسافر تو استعمال شدہ ٹشو پیپر، ٹوتھ پکس اور حتیٰ کہ بچوں کے ڈائیپر بھی ائیرہوسٹس کو تھمادیتے ہیں، حالانکہ ان چیزوں کیلئے خصوصی تھیلا آپکو دستیاب ہوتا ہے۔ * مختصر پروازوں کیلئے چھوٹے طیارے ہی استعمال ہوتے ہیں، پھر بھی کچھ مسافر طیارے کے چھوٹے ہونے کا شکوہ کرتے رہتے ہیں۔ * کھانا پیش کرنے کے وقت واش روم جانے والے ہمارے راستے کی رکاوٹ ثابت ہوتے ہیں۔ * کسٹمز فارم پر کرنے کیلئے یا کسی بھی دیگر ضرورت کے لئے براہ کرم مجھ سے قلم مت مانگیں، کیونکہ میرے پاس موجود قلم کا میرے پاس رہنا ضروری ہے، کیونکہ یہ میری ڈیوٹی کا تقاضہ ہے۔