- الإعلانات -

مائیکل جیکسن کی بہن جینٹ جیکسن نے اسلام قبول کرلیا.

لاس اینجلس: امریکی پاپ گلوکارآنجہانی مائیکل جیکسن کی بہن ہالی وڈ گلوکارہ جینٹ جیکسن نے اسلام قبول کرلیا ہے اور ساتھ ہی ساتھ انہوں نے ایک نہایت قابل تحسین قدم اٹھاتے ہوئے نہ صرف نازیبا لباس پہننا ترک کر دیا ہے بلکہ آئی ہارٹ ریڈیو میوزک فیسٹیول میں شرکت سے بھی صاف انکار کر دیا ہے ۔ غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے مطابق جینٹ جیکسن نے 2012ءمیں49سالہ مسلمان ارب پتی وسام المنا سے شادی کی تھی جس سے وہ اتنی متاثر ہوئیں کہ انہوں نے اسلام قبول کرلیا ہے۔ برطانوی اخبار دی سن نے امریکی گلوکارہ کے قریبی ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا ہے کہ جینٹ جیکسن دائرہ اسلام میں داخل ہو کر بہت پُرسکون اور مطمئن ہو گئیں ہیں جبکہ نازیبا ڈانس اور جنسی میوزک سے بہت دور ہو چکی ہیں ۔ اخبار دی سن نے مزید بتایا ہے کہ جینٹ نے ”انشاءاللہ “کہہ کر میوزک فیسٹیول میں شرکت سے انکار کیا یعنی اگر اللہ نے چاہا تو وہ فیسٹیول میں شامل نہیں ہونگی۔امریکی گلوکارہ نے کہا کہ انہوں نے اس بارے میں اپنے فیملی ارکان کو بھی بتایا ہے جنہوں نے انکے نئے انتخاب کا مکمل طور پراحترام کیا ہے۔ جینٹ جیکسن اسلام ،اس کی تعلیمات اور اس کے پیروکاروں کا مطالعہ کرنے کےلئے کافی وقت صرف کرتی ہیں۔دوسری جانب لاس ویگاس ریویو جرنل کے مطابق کان سے متعلق کسی مسئلے کیو جہ سے وہ میوزک فیسٹیول میں نہیں جا سکتی۔ واضح رہے کہ بہت سے لوگ سمجھتے ہیں جینٹ جیکسن کافی عرصہ پہلے ہی اسلام قبول کر چکی ہیں تاہم یہ درست نہیں ۔بھائی مائیکل جیکسن کے علاوہ لا ٹویا جیکسن ، ریبی جیکسن ان کی بہنیں جبکہ جرمین جیکسن ، رینڈی جیکسن ان کے بھائیوں میں شامل ہیں ان کے علاوہ جینٹ کے اور بھی بھائی ہیں ۔