- الإعلانات -

اقوام متحدہ کے اسکول پر حملے کی تحقیقات,20سےزائد بچے جاں بحق ہوگئے۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل بان کی مون کی جانب سے رواں ہفتے بدھ کے روز شام کے اسکول پر حملے کی تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا ہے۔حملے میں20سے زائد بچے جان کی بازی ہارگئے تھے۔

شام کے شہر ادلب میں باغیوں کے زیر قبضہ علاقے میں بدھ کے روز شدید بمباری کی گئی جس کے نتیجے میں اسکول کے 20سےزائد بچے جاں بحق ہوگئے۔

اقوام کے متحدہ کے مطابق رواں ماہ کے دوسرے ہفتے سے لے کر اب تک پانچ اسکولوں کونشانہ بنایا گیا ہے جس میں کئی معصوم بچے جان کی بازی ہار چکے ہیں اورمتعدد ان حملوں میں شدید زخمی ہیں۔

شام میں طبی عملے کا کہناہے کہ ادلب حملے میں جاں بحق افراد کی تعداد 35تک پہنچ گئی ہے اور ان میں اکثریت بچوں کی ہے۔

دوسری جانب روسی وزارتِ دفاع کے ترجمان میجر جنرل ایگور کونس شینکوف کا کہناہے کہ اسکول پر حملے کا دعویٰ جھوٹ پر مبنی ہے۔ان کا کہناتھاکہ  ایک روسی ڈرون سے جمعرات کو لی جانے والی تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ اسکول کی چھت اب بھی سلامت ہے۔