- الإعلانات -

عمران فاروق کے قا تل کی بارہ سالہ بچے نے شناخت کر دی۔

لندن ……لندن میں بارہ سالہ بچے نے عمران فاروق کو قتل ہوتے دیکھا، محسن علی سید کو پہچان لیا، بچے سمیت 5افراد قتل کے گواہوں میں شامل ہیں، اگلے دو ہفتوں کے دوران لندن میں اہم گرفتاریوں کا امکان ہے۔
ایم کیوایم کے رہنما ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس حل ہونے کے قریب پہنچ گیا۔ذرائع کے مطابق ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس میں اگلے دو ہفتے میں انتہائی اہم پیش رفت ہوگی۔اسکاٹ لینڈ یارڈ کے سامنے ملزمان نے اہم انکشافات کیے۔ملزم محسن علی سید نے لندن میں موجود کئی افراد کے نام لیے ہیں۔ ملزم کی نشاندہی پر لندن میں اہم گرفتاریاں ہوسکتی ہیں۔ اسکاٹ لینڈ یارڈ نے گزشتہ جمعے اور اتوار کو قتل کے پانچ گواہوں سے بھی ملاقات کی تھی۔ ان گواہوں میں ایک بارہ سالہ برطانوی بچہ بھی شامل ہے۔
عمران فاروق کے قتل کے وقت اس بچے کی عمرسات برس تھی،بچے کا کہنا ہے کہ قاتلوں نےعمران فاروق کو قتل کرنے سے پہلے وہاں موجود بچوں کو بھگادیا تھا لیکن وہ اس وقت وہاں سے ہٹا جب قاتلوں نے عمران فاروق پر چاقو اوراینٹوں سے حملہ کیا۔ گواہ بچے نے ملزم محسن علی سید کی تصویر دیکھ کراسے پہچان لیا ہے۔برطانوی پولیس عمران فاروق کی بیوہ شمائلہ عمران سے اگلے ہفتے ملاقات کرے گی۔