- الإعلانات -

امریکا نے چین سے امریکی بحری ڈرون واپس کرنے کی درخواست کر دی

بیجنگ: امریکہ نے چین کی طرف سے پکڑی گئی امریکی ڈرون آبدوز کو واپس کرنے کے لیے چین سے باظابطہ درخؤاست کی ہے ،  چین نے گزشتہ ساوتھ چائنا سی میں ایک امریکی آب دوز کو قبضے میں لے لیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز جب بین الااقوامی سمندری حدود میں امریکی بحری جہاز یو ایس این ایس بوڈچ بحری ڈرون کو سمندر سے نکال رہا تھا تو چینی بحریہ نے یہ بحری ڈرون قبضے میں لے لیا ۔

امریکی حکام کا موقف ہے کہ اس آبی ڈرون کو ’اوشن گلائڈر‘ کا نام دیا گیا ہے اور یہ پانی میں نمکیات اور اس کے درجہ حرارت کا تجزیہ کرنے کے لیے بنایا گیا ہے۔

امریکی حکام نے وضاحت کی ہے کہ یہ زیر آب چینلزکے نقشے حاصل کرنے کے ایک پروگرام کا حصہ ہے اور اسے خفیہ کارروائی کہنا نامناسب ہے۔

امریکا کا مزید کہنا ہے کہ آبی ڈرون پر واضح الفاظ میں تحریر تھا کہ یہ امریکی ملکیت ہے اور اس کو پانی سے نکالا نہیں جا سکتا۔

امریکی بحریہ نے چین کی کارروائی پر تنقید کرتے ہوئے یہ بھی کہا ہے کہ ایک پیشہ ور بحریہ سے اس طرح کے رویے کی امید نہیں کی جاتی۔