- الإعلانات -

پی ٹی وی کو کروڑوں روپے خسارہ چھپا کر منافع ظاہر کیا گیا. ایم ڈی کا انکشاف

اسلام آباد(آن لائن) سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات و نشریات میں ایم ڈی پی ٹی وی نے انکشاف کیا ہے کہ گذشتہ 6 برسوں کے دوران پی ٹی وی کو ہونے والے کروڑوں روپے خسارے کو چھپا کر منافع ظاہر کیا گیا ،کمیٹی نے پی ٹی وی کے سابقہ ایم ڈی کو معاملے کی وضاحت کیلئے طلب کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے ،چیرمین کمیٹی اور اراکین پیمرا کی جانب سے رپورٹ فراہم نہ کرنے پر برس پڑے قائمقام چیرمین پیمرا نالائق ہے اسے فوری طور پر ہٹا دیا جائے ،کمیٹی نے چیرمین پیمرا کی تعیناتی کیلئے سفارشات نظر انداز کرنے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے اسے من پسند شخص کو نوازنے کی کوشش قرار دیدیاہے ۔کمیٹی کا اجلاس چیرمین کامل علی آغا کی صدارت میں پی ٹی وی ہیڈکواٹر میں منعقدہوا اجلاس میں ایم ڈی پی ٹی وی محمد مالک نے پاکستان ٹیلی ویژن کی موجودہ صورتحال پر تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ پی ٹی وی کے سابقہ منیجنگ ڈائریکٹرز نے زندہ باد کی خاطر ملازمین کی تنخواہوں میں بے دریغ اضافہ کیا جس کی وجہ سے آج ادارے کے بجٹ کا 66فیصد ملازمین کی تنخواہوں میں خرچ ہو جاتا ہے انہوں نے بتایاکہ گذشتہ ایک دہائی سے پی ٹی وی کیلئے نئے اور جدید آلات خریدے نہ جا سکے اس وقت پی ٹی وی کے پاس صرف 6ڈی ایس این جیز گاڑیاں ہیں جبکہ فوری طور پر مذید گاڑیوں کی ضرورت ہے انہوں نے بتایا کہ 2009سے 2014تک پی ٹی وی کے حسابات کے ریکارڈ کی جانچ پڑتال کے دوران انکشاف ہوا کہ ہر سال کروڑوں روپے کا خسارہ ہوتا تھا مگر خسارے کو چھپا کر منافع کو ظاہر کیا جاتا رہا انہوں نے کہاکہ اس وقت پی ٹی وی پر 35000ملازمین پنشنیرز اور ان کے اہل خانہ کا بوجھ ہے جن کو تنخواہوں کی ادائیگی پر ادارے کے 66فیصد بجٹ خرچ ہو جاتا ہے انہوں نے کہاکہ ہم پی ٹی وی کو جدید خطوط پر استوار کرنے کیلئے اقدامات کر رہے ہیں انہوں نے بتایاکہ پی ٹی وی سپورٹس اور پی ٹی ہوم منافع بخش جا رہے ہیں پی ٹی وی سپورٹس کے پاس 2015سے2018تک کے مختلف کھیلوں کے نشریاتی حقوق ہیں اور امید ہے کہ اگلے چند روز میں ورلڈ کرکٹ کپ کے نشریاتی حقوق بھی مل جائیں گے انہوں نے بتایا کہ پی ٹی وی پشتو کی تجویز بھی زیر غور ہے جس پر جلد ہی عمل درآمد کیا جا رہاہے کمیٹی کے رکن مشاہداللہ خان نے پی ٹی وی سپورٹس کی کارکردگی کو مذید بہتر بنانے کیلئے علاقائی کھیلوں اور سکولوں کالجوں کی سطح پربھی کھیلوں کو فروغ دیا جائے کمیٹی کے چیرمین کامل علی آغا نے پیمرا سے مانگی جانے والی رپورٹ نہ ملنے پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ قائمقام چیرمین پیمرا نالائق شخص ہے جس کو فوری طور پر ہٹا دینا چاہئے انہوں نے کہاکہ پیمرا کا چیرمین پارلیمنٹ کو بھی تسلیم نہیں کر تا ہے کمیٹی کو بتایا گیا کہ چیرمین پیمرا کیلئے 53درخواستیں موصول ہوئی تھی جس میں 39افراد کو شارٹ لسٹ کیا گیا ہے اور ان کے انٹریو ہو چکے ہیں کمیٹی کے اراکین نے وزارت اطلاعات کی جانب سے چیرمین پیمرا کی آسامی کیلئے کمیٹی کی سفارشات نظر انداز کرنے پربھی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وزارت کسی مخصوص شخص کو نوازنے کیلئے کمیٹی کی سفارشات نظر انداز کر رہی ہے کمیٹی نے چیرمین پیمرا کی تعیناتی کیلئے نیا اشتہار جاری کرنے اور موجودہ طریقہ کار کو ختم کرنے کی سفارش کر دی ہے ۔