- الإعلانات -

حوثی باغیوں نے 25 صحافی وانسانی حقوق کارکن یرغمال بنا لیے

صنعا : یمن میں شدت پسندحوثی باغیوں نے ملک کے وسطی شہر اِب میں ایک ہوٹل میں مقیم 25 صحافیوں اور انسانی حقوق کے کارکنوں کو اغوا کرلیا ہے۔ یرغمال بنائے گئے شہریوں میں اِب اور تعز کے شہری شامل ہیں۔یمن کے مقامی ذرائع کے مطابق تین فوجی گاڑیوں پر مشتمل جنگجوؤں نے اِب گارڈن نامی ہوٹل پر دھاوا بول دیا اور وہاں پر موجود انسانی حقوق کے کارکنوں کو یرغمال بنا لیا۔ ان کارکنوں نے منگل کو اب اور تعز شہروں میں پانی کی بندشکے خلاف ریلیوں میں حصہ لینا تھا۔ایک عرب نیوز ویب سائٹ کے مطابق احتجاجی ریلی کے لیے قائم کردہ کمیٹی کے 25 کارکنوں جن میں صحافی اور انسانی حقوق کے کارکن بھی شامل ہیں، کو یرغمال بنانے کے بعد نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے۔خیال رہے کہ تعز اور اِب نامی شہروں میں حوثیوں کے محاصرے کے باعث مقامی آبادی کو پینے کے پانی اور خوراک کی شدید قلت کا سامنا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ انسانی حقوق کے کارکنوں اور صحافیوں کو یرغمال بنانے والے عناصر میں حوثی باغی اور منحرف سابق صدر علی عبداللہ صالح کی وفادار ملیشیا کے ارکان ملوث ہیں۔