- الإعلانات -

مودی سرکار کے منہ زور آپے سے باہر

کشمیری نوجوان کو انسانی ڈھال بنانے پرسابق بھارتی جنرل کا دل بھی پسیج گیا، بھارتی فوج کو آئینہ دکھایا تو مودی سرکار کے حمایتی کھل کر سامنے آ گئےاورریٹائرڈ لیفٹیننٹ جنرل ایچ ایس پناگ کو مارنے پیٹنے کی دھمکی دے ڈالی۔

سری نگر میں انسانیت سوز واقعے کے بعد لیفٹیننٹ جنرل(ر) ایچ ایس پناگ نے کہا تھا کہ جتنا بھی اشتعال دلایا جا رہا تھا، بھارتی فوج کو غیر قانونی فعل کا سہارا نہیں لینا چاہئے تھا، یہ واقعہ بھارتی قوم اور بھارتی فوج کو مدتوں پریشان کرے گا۔

سابق بھارتی فوجی کے اس بیان پر زعفرانی ٹولا تلملا گیا، سوشل میڈیا پر اپنے ہی سابق فوجی کے خلاف محاذ کھول دیا، جن میں گلوکارابھیجیت بھی شامل تھے،لیکن اب بھارتی سپریم کورٹ کے سابق جج مرکھنڈے کاٹجو جنرل پناگ کے دفاع میں سامنے آ گئےہیں۔

سابق جج نے جنرل کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ غالب سے ایک بار لوگوں نے پوچھا تھا کہ آپ اپنے ناقدین کو جواب کیوں نہیں دیتے،غالب نے کہا تھا اگر گدھا آپ کو لات مارے تو کیا آپ بھی اسے لات ماریں گے؟ آپ پریشان کیوں ہوتے ہیں؟

سابق جج مرکھنڈے کاٹجو مسلمانوں کے حق میں آواز اٹھانے کے لئے مشہور ہیں،انہوں نے بالی ووڈ میں پاکستانی فنکاروں کے کام کرنے کی بھی کھل کر حمایت کی تھی۔