- الإعلانات -

شادی سے قبل لڑکی کو دیکھنے کی خواہش پر لڑکے کو مار مار کر برا حال کردیا۔

ریاض :  ایک سعودی مفتی کی طرف سے یہ فتویٰ دیا گیا تھا کہ شادی سے قبل لڑکا لڑکی کو دیکھنے کا حق رکھتا ہے اوراسی پر عمل درآمد کرتے ہوئے جب ایک نوجوان نے یہ حق استعمال کرنے پر اصرار کیا تو لڑکی والوں نے مار مار کر اس کا برا حال کردیا۔ لڑکے کو لڑکی والوں کی تمام شرائط قبول تھیں مگر وہ منگنی سے پہلے لڑکی کو دیکھنا چاہتا تھا۔ لڑکی والوں نے نوجوان کو سمجھایا کہ وہ اسے لڑکی دیکھنے کی اجازت نہیں دے سکتے مگر جب اس نے اصرار کیا تو لڑکی کے والدین مشتعل ہوگئے اور اسی دوران لڑکی کے بھائی نے ایش ٹرے اٹھا کر لڑکے کے سر پر دے ماری اور پھر اس پر باقاعدہ تشدد شروع کردیا۔ ناپسندیدہ صورتحال کی وجہ سے منگنی ملتوی ہوگئی ۔