- الإعلانات -

چینی کھانے کے بڑے نقصانات

لندن: ہم چینی کا استعمال بکثرت مشروبات اور کھانوں میں کرتے ہیں لیکن اگر اسے چھوڑ دیا جائے تو جسم میں حیرت انگیز تبدیلیاں ہوتی ہیں۔
جلد کی خرابی
میٹھی اشیاءجیسے چاکلیٹ،میٹھائیاں،سافٹ ڈرنکس وغیرہ کے استعمال سے جسم میں چینی کا لیول بڑھتارہتا ہے جس کا اثر براہ راست ہماری جلد پر ہوتا ہے اور وہ خراب ہونے لگتی ہے۔اگر جلد پر کوئی دانا یا پھنسی نکلی ہوتو چینی کھانے سے اس کے خراب ہونے کے امکانات بڑھ جاتے ہیں اور اس کے ساتھ ہی چینی کھانے کی وجہ سے جسم پر دانے بھی زیادہ نکلتے ہیں۔
بڑھاپے میں جلدی
جیسا کہ بتایا گیا ہے کہ چینی جلد کے لئے نقصان دہ ہے لہذا یہ بھی ہوتا ہے کہ جلد ڈھلکنے لگتی ہے اور بڑھاپے کے آثار جلد ظاہر ہوجاتے ہیں۔نیدر لینڈ کی لیڈن یونیورسٹی کی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ جن لوگوں کے خون میں چینی کی زیادہ مقدار تھی وہ ان لوگوں کی نسبت زیادہ بوڑھے لگ رہے تھے جن کے خون میں چینی کی کم مقدار تھی۔
بے خوابی
چینی کے زیادہ استعمال سے آپ کی نیند کم ہونے لگتی ہے اور آپ بے خوابی کا شکار رہتے ہیں۔2016ءمیں کی گئی تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ چینی کی زیادہ مقدار کی وجہ سے نیند میں خلل پیدا ہونا ایک معمول بن جاتا ہے۔
دل کی بیماریاں
جس طرح نمک بلڈ پریشر کے لئے نقصان دہ ہے بالکل اسی طرح چینی بھی اپنے ساتھ بہت سے نقصانات لاتی ہے۔جو لوگ چینی کی وجہ سے 25فیصد زیادہ حرارے لیتے ہیں ان میں دل کی بیماریوں میں مبتلا ہونے کے امکانات زیادہ ہوتے ہیں۔
یاداشت میں کمی
ایک تحقیق میں سائنسدانوں نے چوہوں کو فروکٹوس والی غذا دی جس کی وجہ سے ان کی یاداشت پر اثر دیکھا گیا۔ماہرین کا کہنا ہے کہ زیادہ چینی کھانے سے یاداشت کمزور ہوجاتی ہے۔