- الإعلانات -

کمپیوٹر کا استعمال،دماغی مسائل میں کمی

اگر تو آپ بڑھاپے میں بھی اپنے دماغ کو جوان رکھنا چاہتے ہیں یا کم از کم دماغی امراض سے بچنا چاہتے ہیں تو ایک کمپیوٹر خرید کر استعمال کرنا شروع کردیں۔

یہ دعویٰ امریکا میں ہونے والی ایک تحقیق میں سامنے آیا۔

مایو کلینک کی تحقیق کے مطابق عمر کی چھٹی یا ساتویں دہائی میں لوگوں کے اندر دماغی تنزلی، الزائمر یا دیگر امراض کا خطرہ بہت زیادہ ہوتا ہے۔

تحقیق میں کہا گیا ہے کہ اگر عمر کی 5 ویں دہائی کے بعد اگر لوگ ہفتے میں کم از کم ایک بار بھی کمپیوٹر کا استعمال کریں تو انہیں دماغی مسائل کا سامنا کم ہوتا ہے۔

اس تحقیق کے دوران 70 سال سے زائد عمر کے دو ہزار افراد کی روزمرہ کی سرگرمیوں کا تجزیہ چار سال تک کیا گیا۔

تحقیق کے مطابق دماغی طور پر مصروف رکھنے والی سرگرمیاں ذہنی امراض سے بچانے کے لیے مددگار ثابت ہوتی ہیں جیسے مطالعے کو معمول بنالینا دماغی امراض کا خطرہ 30 فیصد تک کم کردیتا ہے۔

تاہم نتائج سے معلوم ہوا کہ دماغ کو تازہ دم رکھنے کے لیے سب سے بہترین سرگرمی کمپیوٹر کا استعمال ہے۔

محققین کے مطابق لوگوں میں دماغی تنزلی کا سفر درماینی عمر سے شروع ہوجاتا ہے تاہم سماجی سرگرمیوں سے سرگرم رہ کر یاداشت کے مسائل پر 23 فیصد تک قابو پایا جاسکتا ہے۔