- الإعلانات -

خبردار! آلو کا استعمال ہائی بلڈ پریشر کا سبب بن سکتا ہے

برٹش میڈیکل جرنل کی نئی تحقیق کے مطابق ہفتے میں چار یا اس سے زیادہ مرتبہ آلو کو بطور خوراک استعمال کرنے سے ہائی بلڈپریشر کے امکان 11 فیصد بڑھ جاتے ہیں جب کہ فرنچ فرائز کھانے سے اس مرض کے امکان اور زیادہ یعنی 17 فیصد بڑھ جاتے ہیں۔

ماہرین نے اس تحقیق میں یہ بھی دریافت کیا کہ آلو کی جگہ کچی سبزیاں کھانے سے ہائی بلڈ پریشر کا امکان 7 فیصد تک کم ہو جاتا ہے۔ ہائی بلڈ پریشر بڑھانے کی وجہ آلوؤں میں گلیکیمک انڈیکس جسے جی آئی کہتے ہیں کی کثیر مقدار ہے۔ زیادہ جی آئی کی حامل چیزیں زیادہ اور تیزی سے توانائی فراہم کرتی ہیں جس کی وجہ سے بلڈ شوگر تیزی سے بڑھتی ہے۔

اس تحقیق میں گزشتہ بیس سالوں پر مشتمل 187000 افراد کا ڈیٹا استعمال کیا گیا جس میں ان کا وزن بھی مدنظر رکھا گیا لیکن نتائج یہی ثابت ہوئے۔ اُبلے یا پکے ہوئے ہر طرح کے آلوؤں کو بطور خوراک استعمال کرنے پر یہ تحقیق کی گئی جس میں صرف کرسپس کو ہائی بلڈپریشر کا سبب نہیں پایا گیا جنھیں عموماً ہمارے چپس کہتے ہیں۔