- الإعلانات -

افغانستان اور پاکستان کے سرحدی علاقے پولیو کی آماجگاہ

افغانستان اور پاکستان کے سرحدی علاقے پولیو کی آماجگاہ بن گئے ہیں۔ گزشتہ چند سالوں کے دوران دنیا میں سب سے زیادہ پولیو کیسز یہیں رپورٹ ہوئے جبکہ آج بھی ہرروزافغانستان سے پاکستان آنے والے 300بچے انسداد پولیوکے قطرے پینے سے محروم رہ جاتے ہیں۔
باعث تشویش امریہ ہے کہ جنوبی افغانستان اور بلوچستان میں پولیو ایک طرح کی ’ وبا‘ بناگئی ہے اور ہر محاذ پر پولیو کے خلاف جنگ لڑنے والے پاکستان کے لئے یہ صورتحال انتہائی سنگین اور یومیہ 300بچوں کا انسداد پولیو قطروں سے محروم رہ جانا۔۔ یقینا کسی بھیانک خطرے سے کم نہیں۔