- الإعلانات -

اس غذا سے دوری گنج پن کا خطرہ بڑھائے

گنج پن کسے پسند ہوسکتا ہے خاص طور پر مردوں میں تو اس کا امکان بہت زیادہ ہوتا ہے مگر سائنس نے اس سے بچنے کا ایک قدرتی ذریعہ بتا دیا ہے جو آپ کو اس کا شکار ہونے سے بچا سکتا ہے۔

اور وہ ہے غذا میں ایک شے کو لازمی حصہ بنائے رکھنا، جس کی عدم موجودگی بالوں کے گرنے کے عمل کو تیز کرسکتا ہے۔

یہ بات ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی۔

برطانیہ میں ہونے والی تحقیق کے مطابق اگر لوگ اپنی غذا کو سبزیوں تک محدود کردیں یا گوشت بہت کم کھائیں تو ان میں گنج پن کا عمل تیز ہوجاتا ہے۔

تحقیق کے مطابق مردوں کی غذا میں گوشت کا ہونا بہت ضروری ہے کیونکہ وہ صحت مند بالوں کے لیے ضروری اجزاءسے بھرپور ہوتا ہے۔

تحقیق میں بتایا گیا کہ گائے کے گوشت اور چکن وغیرہ میں ایسے اجزاءکی بھرپور مقدار ہوتی ہے جو کہ بالوں کی نشوونما کے لیے ضروری ہیں، جن میں آئرن قابل ذکر ہے، جس کی کمی گنج پن کی جانب سفر تیز کردیتی ہے۔

محققین کا کہنا تھا کہ مردوں میں بالوں سے محرومی کی متعدد وجوہات ہوسکتی ہیں، یہ جینیاتی اثر ہوسکتا ہے، کوئی جلدی عارضہ، تھائی رائیڈ مسائل وغیرہ ہوسکتے ہیں، مگر یہ قدرتی اجزاءکی کمی کی وجہ بھی ہوسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آئرن کی کمی گنج پن کا ایک بڑا سبب ہے جو کہ بالوں کی نشوونما کے لیے ضروری ہوتا ہے۔

اس تحقیق کے دوران آئرن کی کمی اور بالوں سے محرومی کے درمیان تعلق کا انکشاف کیا گیا۔

محقیقن کے مطابق آئرن سے بھرپور غذا بالوں کو بحال کرتی ہے اور اس کی کمی کی صورت میں گنج پن لگ بھگ یقینی ہوجاتا ہے۔

محققین نے مشورہ دیا کہ مردوں کے لیے روزانہ 8 ملی گرام آئرن جسم کا حصہ بنانی چاہئے اور گوشت اس کے لیے اہم ذریعہ ثابت ہوسکتا ہے جبکہ پالک، بیج اور خشک میوہ جات سے بھی اسے حاصل کیا جاسکتا ہے۔

تاہم آئرن سپلیمنٹ لینے کا فیصلہ ڈاکٹروں کے مشورے کے بغیر نہیں کرنا چاہئے۔