- الإعلانات -

خراب نیند مزاج میں چڑچڑا پن اور جسمانی وزن میں بھی اثرانداز ہوتی ہے

ایک رات کی خراب نیند نہ صرف مزاج میں چڑچڑا پن کا سبب بنتی ہے بلکہ یہ آپ کے جسمانی وزن پر بھی اثرانداز ہوتی ہے۔

اس بات کی وضاحت ایک ویڈیو میں کی گئی ہے جسے برائن کرافٹ نامی سائیکلوجی اور نیوروسائنسز ادارے نے تیار کیا ہے۔

اس میں بتایا گیا ہے کہ خراب نیند کے باعث معدے میں پائے جانے والے ننھے بیکٹریا یا مائیکرو بیز کی برادری کے توازن کو خراب کرنے سے جسمانی وزن میں اضافہ ہوتا ہے۔

بیکٹریا کی یہ برادری کسی بھی فرد کے مزاج، تناﺅ کی سطح اور نیند پر اس صورت میں اثرات مرتب کرسکتے ہیں جب انہیں تنگ کیا جائے۔

ویڈیو میں بتایا گیا ہے کہ ایک رات کی خراب نیند کے نتیجے میں جسم میں ہارمون کا سبب بننے والے ہارمون کورٹیسول کی سطح بڑھ جاتی ہے جو معدے میں پائے جانے والے بیکٹریا پر مضر اثرات مرتب کرتی ہے۔

جب یہ بیکٹریا نیند اور جاگنے کے چکر میں ‘مداخلت’ کرتے ہیں تو اس سے میٹابولزم متاثر ہوتا ہے اور اس کا نتیجہ جسمانی وزن میں اضافے کی صورت میں نکلتا ہے۔

ویڈیو میں مزید بتایا گیا ہے کہ جب ہمارے جسم کی اندرونی گھڑی کو چھیڑا جاتا ہے تو مضر صحت غذا کی اشتہا بڑھتی ہے اور ان کا استعمال طلب کو مزید بڑھاتا ہے۔

کچھ تحقیقی رپورٹس کے مطابق معدے میں پائے جانے والے یہ بیکٹریا دوران نیند جسمانی کیلوریز کو جلانے کا بھی کام کرتے ہیں۔