- الإعلانات -

پارلیمنٹ کی عمارت کو شمسی توانائی پر منتقل

اسلام آباد:وزیراعظم نوازشریف نے پارلیمنٹ کی عمارت کو شمسی توانائی پرمنتقل کرنے کاافتتاح کردیا۔ کہتے ہیں  بجلی بحران پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ ہے۔

پارلیمنٹ کی عمارت کو شمسی توانائی پر منتقلی کی افتتاحی تقریب میں چینی سفیرسن وی ڈونگ، اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق، چیئرمین سینیٹ رضاربانی اور دیگر وزراء بھی شریک تھے۔ رضاربانی اور سردار ایاز صادق نے وزیراعظم کی آمد پر ان کا استقبال کیا۔

افتتاح کے بعد اپنے مختصرخطاب میں وزیراعظم نوازشریف کا کہنا تھا کہ بجلی بحران پاکستان کاسب سےبڑامسئلہ ہے، 2018 میں یہ بحران مکمل طور پر ختم ہو جائے گا۔ خوشی ہے کہ پارلیمںٹ نے اپنے لیے خود بجلی پیدا کرنے کا سوچا۔

وزیراعظم نے چیئرمین سینیٹ اور اسپیکر اسمبلی کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ پارلیمنٹ قانون سازی اورعوام کی فلاح کیلئےکام کرتی ہے، اسے شمسی توانائی پر چلانا خوش آئند ہے ،پرائیوٹ سیکٹر میں بھی ایسے اقدامات کیے جانے چاہیئں۔

انہوں نے کہا کہ پاور سیکٹر میں توانائی کے متعدد منصوبوں پر کام ہو رہا ہے۔کچھ منصوبے رواں سال اور دیگر 2017 تک مکمل کر لیے جائیں گے۔

وزیراعظم نے مزید کہا کہ پاک چین اقتصادی راہداری تکمیل کے مراحل میں ہے۔ چینی سفیر اور میں خود بھی اس کی نگرانی کر رہے ہیں۔ منصوبے سے پاکستان اور چین سمیت پورے خطے کو بےپناہ فائدہ پہنچے گا۔