- الإعلانات -

چارسدہ سیشن کورٹ میں خودکش حملہ، 8 افراد ہلاک اور 14 زخمی

چارسدہ: صوبہ خیبر پختونخوا کے ضلع چارسدہ کی تحصیل شبقدر کے سیشن کورٹ میں خودکش حملے میں دو پولیس اہلکاروں سمیت 8 افراد ہلاک اور خواتین و بچوں سمیت 14 زخمی ہوگئے۔o

تحصیل شبقدر کے سیشن کورٹ میں زوردار دھماکے سے وہاں موجود کئی گاڑیوں میں آگ لگ گئی، دھماکے کے وقت کچہری کے احاطے میں لوگوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔

دھماکے کے بعد سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا جبکہ زخمیوں کو شبقدر اور پشاور کے لیڈینگ ہسپتالوں منتقل کیا گیا، جہاں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر (ڈی پی او) سہیل خالد نے ڈان کو بتایا کہ دھماکا خودکش تھا، حملہ آور نے عدالت کے احاطے میں گھسنے کی کوشش کی تاہم داخلی دروازے پر موجود پولیس اہلکاروں نے اسے روک لیا۔

انہوں نے بتایا کہ پولیس اہلکاروں نے خودکش حملہ آور کو روکنے کے لیے فائرنگ کی جس پر اس نے خود کو زوردار دھماکے سے اڑا لیا۔

انہوں نے حملے میں دو پولیس اہلکاروں سمیت 8 افراد کے ہلاک اور 14 کے زخمی ہونے کی بھی تصدیق کی۔

ڈسٹرکٹ انسپیکٹر جنرل (ڈی آئی جی) سعید وزیر کا میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہنا تھا کہ سیشن کورٹ کی سیکیورٹی مناسب تھی اور دھماکے کے وقت 18 پولیس اہلکار سیکیورٹی کے لیے تعینات تھے۔