- الإعلانات -

پرویز مشرف کے فیصلے کے بعد اب فوج اور سپریم کورٹ کے درمیان کیا ہو گا ؟شیخ رشید نے سنگین صورتحال کا اظہار کردیا

وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ اس فیصلے سے فاصلے بڑھ رہے ہیں اور کشیدگی کی طرف جا رہے ہیں ،ملک کا خزانہ لوٹنے والوں کی ضمانتیںاور ملک کی دفاع کرنے والوں کی سزائیں ہو رہی ہیں ،اگر آرمی چیف غدار ہو سکتا ہے تو چوروں کے بارے میں کیا کہیں گے ۔ان کا کہنا تھاکہ اس وقت فوج کی کمانڈ اینڈ کنٹرول جنرل قمر جاوید باجوہ کے پیچھے کھڑی ہے ،کسی کو غلط فہمی نہیں ہونی چاہیے ،آج اپوزیشن جو باتیں کر رہی ہے ،ذوالفقار علی بھٹو سے نواز شریف تک یہ سب جی ایچ کیو گیٹ نمبر چار کی پیدا وار ہیں ۔نجی نیوز چینل سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ آرمی چیف کی توسیع کے معاملے پر بھی فوج میں بہت ری ایکشن تھا ،اس ایکسٹینشن کی جس طرح بریکنگ بنائی گئی ،اسے پسند نہیں کیا گیا ،اب پرویز مشرف کا فیصلہ آگیا جس سے فاصلے بڑھے ہیں ۔میرے حلقے میں بہت سخت ری ایکشن ہے ،میرے حلقے میں جی ایچ کیو اور ٹین کور آتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ابھی اپیل کے لیے تیس دن ہیں ،اب سپریم کورٹ میں کیس جائے گا تو یہ اور بھی بڑا ایشو بن جائے گا ۔شیخ رشید نے مزید کہا کہ پاک فوج میں ابھی رنجش نہیں بلکہ افسوس ہے ۔