- الإعلانات -

اگر ایم ایل ون نہ بنی تو ریلوے دس سال تک نہیں چل سکتی ۔ شیخ رشید

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ اگر ایم ایل ون تعمیر نہ کی گئی تو محکمہ تباہ ہو جائے گا ،میں ایم ایل ون مکمل کرانے کے لیے پورا زرو لگا رہا ہوں ، اس منصوبے کے مکمل ہونے کے بعد سیاست کو خیر آباد کہہ دوں گا ۔نجی نیوز چینل جیو نیو ز کے پروگرام ’نقطہ نظر‘میں گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ایم ایل ون کے تحت 1880کلو میٹر کا ڈبل ٹریک کراچی سے پشاور کے درمیان بنا یا جائے گا ،راولپنڈی سے کراچی کا آٹھ گھنٹے کا سفر ہے ،ابھی اس ٹریک پر 120کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے ٹرین چلانا خود کشی کے مترادف ہے ،ایم ایل ون منصوبے کے بعد سب کچھ نیا ہو گا ٹریک سے لے کر اشاروں تک ،جس سے سفر میں آسانی ہو گی ۔انہوں نے کہا کہ سی پیک ایم ایل ون ،ٹو اور تھری کے لیے تھا لیکن نوا ز شریف نے سڑکوں اور پلوں پر پیسہ لگا دیا ۔شیخ رشید نے کہا کہ عمران خان کا کوئی تجربہ نہیں تھا ،بیورو کریٹس جہیز میں ملے اور زیادہ تر بیورو کریٹس شریف برادران کے ساتھ رہ چکے ہیں ،ابھی بیورو کریٹس نیب کے خوف سے کام نہیں کر رہے ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ اگر ایم ایل ون نہ بنی تو ریلوے دس سال تک نہیں چل سکتی ۔