- الإعلانات -

میجر جنرل آصف غفور نے نریندر مودی کو منہ توڑ جواب دے دیا

ڈی جی آئی ایس پی آرمیجرجنرل آصف غفور نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ بات صرف سات سے دس دن کی نہیں اس سے پہلے اور بعد کی بھی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ فروری2019میں پاک بھارت جنگ دستک دے چکی تھی تاہم افواج پاکستان کی تیاری اور موثرجواب نےامن کاراستہ ہموارکیا ، پاکستان اورافواجِ پاکستان ہمیشہ بھارت کوسرپرائز کریں گی، پاکستانی قیادت نے اس خطرے کواحسن طریقے سے نمٹایا اور جنرل قمرباجوہ کی سپیریرملٹری اسٹریٹیجی نے جنوبی ایشیا کوتباہی سے بچایا، جنگ میں کسی کی ہار جیت نہیں ہوتی، انسانیت ہارتی ہے۔کامیاب ملٹری ڈپلومیسی نے خطے میں امن کے لیے پاکستان کے کردار کو نمایاں کیا۔ ڈیفنس رپورٹرز سے بات چیت کرتے ہوئےان کا کہنا تھا کہ باجوہ ڈاکٹرائن ملکی سلامتی پر کوئی بھی سمجھوتہ کیے بغیر ملک اور خطے میں امن لانا ہے آرمی چیف نے پاکستان کی سلامتی و ترقی کو ہمیشہ مقدم رکھا۔انہوں نے کہا کہ بھارتی حکومت اور ملٹری قیادت غیر ذمہ دارانہ بیانات دے رہے ہیں، جو فوج 80 کشمیریوں کو 71سال سے شکست نہیں دے سکی وہ207 ملین پاکستانیوں کو کیسے شکست دے سکتی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ جنگ شروع آپ کریں گے اور ختم ہم کریں گے۔ پاکستانی سول و ملٹری لیڈر شپ خطے میں امن کی خواہاں ہے۔ انڈین سول ملٹری لیڈر شپ کو بھی خطے میں امن کی اہمیت کا ندازہ ہونا چاہیے۔افواج اسلحے کے زور پر نہیں، جذبہ ایمانی اور عوام کی حمایت سے لڑتی ہیں۔ ذمہ دارافراد بھارتی وزیراعظم جیسے بیانات نہیں دیتے۔بھارتی لیڈر شپ کو چاہیے کہ مقبوضہ کشمیر میں ظلم وستم کو بند کریں کیوں کہ وہاں لگی آگ پورے خطے میں پھیل سکتی ہے اور د±نیا کو بھی اس خطرے کا ادراک ہو نا چاہیے۔