- الإعلانات -

یہ کتاب یونیورسٹیوں اور کالجوں میں متعارف ہونی چاہیے اور ملک کی ہر لائبریری میں موجود ہونی چاہیے۔ سابق چیف جسٹس پاکستان افتخار محمد چوہدری

اسلام آباد(روز نیوز رپورٹ )ایس کے نیازی کی کالموں پر مشتمل کتاب ”حلقہ احباب“ کامیابی اور پذیرائی کے مراحل طے کررہی ہے سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے اپنے دولت کدے پر ”حلقہ احباب “کی تقریب پذیرائی کا اہتمام کیا۔ سابق چیف جسٹس نے اس موقع پر ایس کے نیازی سے کتاب وصول کرنے کے بعد کتاب میں شامل اپنی رائے پڑھی او اس بات کا بھی اظہار کیا کہ یہ کتاب یونیورسٹیوں اور کالجوں میں متعارف ہونی چاہیے اور ملک کی ہر لائبریری میں موجود ہونی چاہیے۔ اُنہوں نے اس کتاب میں اہم موضوعات کے پیش نظر یہ تجویز بھی دی کہ کتاب کا بھی انگریزی ترجمہ بھی کروایا جائے جس پر ایس کے نیازی نے بتایا کہ ان کے صاحبزادے رافع نیازی نے یہ کام شروع کردیا ہے۔ سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری نے ایس کے نیازی کی صحافتی زندگی کے روشن پہلو وں کے حوالے سے کہا ایس کے نیازی انتہائی فہم وفراست رکھنے والے صحافی ہیں۔ ان کے کام ان کی خبریں ان کے پروگرام ان کی تحریریں اور ان کی تقاریر کبھی بھی ذاتی مفادات کیلئے نہیں ہوتی۔ اُنہوں نے ہمیشہ ملک کے مفاد کو پیش نظر رکھا ہے۔ اس موقع پر سابق چیف جسٹس نے مزید کہا کہ جب میں کوئٹہ سے آیا تھا تو میں نے دیکھا ایک شخص روزانہ آتا ہے پہلے میں سمجھا کہ یہ وکیل ہیں پھر معلوم ہوا یہ عوامی اور رفاحی شخصیت ہیں اور عوام سے متعلقہ مسائل کے حوالے سے پیٹشنز دائر کرتے ہیں۔ پھر میری ان سے کربت بڑھی میں نے ان کے اخبارات روزنامہ پاکستان اور ڈیلی دی پیٹریاٹ پر از خود نوٹس لیے خاص طور پر لاپتہ افراد کیلئے ان کی خدمات ناقابل فراموش ہیں۔ سابق چیف جسٹس نے نو مارچ کا دن یاد کرتے ہوئے کہا جب عدلیہ کے خلاف ”کو“ ہوا۔ تو جو پٹیشن دائر ہوئی اور جن سے ہمیں ریلیف ملا کہ چیف جسٹس کیخلاف ریفرنس نہیں بھیج سکتے ہیں ان میںسے ایک پٹیشن ایس کے نیازی کی بھی تھی جو ریلیف کا باعث بنی”حلقہ احباب“ کی تقریب پذیرائی میں ایس کے نیازی نے سابق چیف جسٹس کا اس تقریب کے حوالے سے شکریہ اداکیا اور مزید گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کتاب میں وزیراعظم عمران خان کے کالم موجود ہیں جواُنہوں نے روزنامہ پاکستان میں لکھے تھے۔ اس کتاب میں ان کے والد کا انٹرویو بھی شامل ہے۔ اور اس کتاب کی وساطت سے عمران خان اپنی فلاسفی پر نظر ڈال سکتے ہیں کہ اُنہوں نے حکومت میں آنے سے پہلے کیا وعدے کئے تھے ایس کے نیازی نے یہ بات بھی کی کہ عمران خان مخلص انسان ہیں تا ہم بدقسمتی ہے یا تو ملک کے حالات ہی اجازت نہیں دیتے۔ یا پھر معاشی مشکلات میں ڈلیور نہیں کر پارہے ہیں۔سابق چیف جسٹس کی تقریب پذیرائی کے بعد ایس کے نیازی کی اور ایک ملاقات سیکرٹری اطلاعات اکبر حسین درانی سے ہوئی جن کو ایس کے نیازی نے اپنی کتاب”حلقہ احباب“ پیش کی۔سیکرٹری اطلاعات نے کہا یہ کتاب اہمیت کے حامل ہے اور دراصل یہ ایک ریفرنس بک ہے۔