- الإعلانات -

کرونا وائرس،وزیراعظم عمران خان کو لوگوں سے ملاقاتیں بند کرنے مشورہ دیا گیا تو انہوں نے کیا کہا ؟شاندار خبر آگئی

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے میڈ یا شہباز گل نے بتا یا ہے کہ حکومت کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے تمام وسائل بروے کار لا رہی ہے اور اس حوالے سے وزیراعظم نے سخت اقدامات لینے کا فیصلہ کیا ہے ۔نجی نیوز چینل اے آر وائی کے پروگرام گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے بتا یا کہ وزیر اعظم کو کہا گیا کہ لوگوں سے ملنا کم کردیں لیکن انہوں نے جواب دیا کہ کرونا وائرس سے متعلق میٹنگز بہت ضروری ہیں ،اگر یہ میٹنگز نہ ہوئیں تو بڑا نقصان ہوسکتا ہے ۔شہباز گل نے بتا یا کہ قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے بڑے فیصلے کیے گئے ہیں ۔پروگرام کے دوران کرونا وائرس سے متعلق بحث کرتے ہوئے شہباز گل اور لیگی رہنما عطا اللہ تارڑ کے درمیان تلخ کلامی بھی ہو گئی ۔شہباز گل بات کر رہے تھے کہ درمیان میں عطا اللہ تارڑ نے کچھ کہنا چاہا تو شہباز گل نے انہیں روکتے ہوئے کہا کہ آپ پہلے شریف فیملی کے منشی ہوتے تھے اب آپ ن لیگ کے پالیٹکل سیکریٹری ہیں ،مجھے بات کرنے دیں ۔اس پر عطا اللہ تارڑ نے جواب دیا کہ میں جو مرضی تھا ،آپ کو اس سے کیا مسئلہ ہے ،مجھے آپ کے سیاسی کیرئیر کا بھی پتہ ہے ۔