- الإعلانات -

لاک ڈاؤن میں اگر نرمی کی گئی تو آغاز اِس جگہ سے کریں گے۔۔۔ سندھ حکومت ایک بار پھر سب پر بازی لے گئی،بڑا اعلان کردیا

تفصیلات کے مطابق سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ موجودہ حالات میں سماجی فاصلے اور اپنے گھروں میں رہنا انتہائی ضروری ہے، نماز جمعہ اور مذہبی اجتماعات پر پابندی کا فیصلہ انتہائی تکلیف دہ عمل ہے تاہم عوام کی بہتری اور ان کی صحت کی حفاظت کی خاطر حکومت نے سخت اور تکلیف دہ اقدامات اٹھائے ہیں، اس لئے ہم نے مختلف مکاتب فکر کے علماءکرام سے مشاورت کی اور علما و مشائخ نے حکومت سندھ کے ان اقدامات کو درست قرار دیا ہے کیونکہ حکومت سندھ اپنےلوگوں کی جانوں کومحفوظ بنانےکی خاطرکوشاں ہے۔انہوں نےکہا کہ ہم ایک مشکل دور سے گذر رہے ہیں اس لیے صوبے کے تمام شہری قانون کی پاسداری کو ذمہ داری اور فرض سمجھ کر ادا کریں، لاک ڈاون کے نفاذ سے عوام کی زندگیوں کو محفوظ بنایا جا رہا ہے، نماز جمعہ کے اجتماعات پر پابندی بھی انسانی جانوں کے تحفظ کےلئےلگائی گئی،ہم اپنےلوگوں کی زندگیاں بچانا چاہتےہیں لیکن افسوس کہ ہمارےوزیراعظم کورونا معاملےپرسستی شہرت حاصل کرناچاہتےہیں، وہ اس معاملے پر بھی سیاست کررہے ہیں ،میں اپنے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے پیشگی معذرت کے ساتھ یہ بات کہ رہا ہوں کیونکہ انہوں نےاس حوالےسےہمیں بیان بازی سے منع کیا ہے لیکن مجبورا مجھے یہ باتیں کرنی پڑرہی ہیں، عمران خان ابھی تک اپنی کنٹینر والی سیاست سے باہر نہیں نکل پائے ہیں۔