- الإعلانات -

ٹیلی سکول ٹی وی سے گھروں میں محدود بچوں اور دور دراز علاقوں کے لوگوں کو تعلیم کی سہولت میسر آئے گی،

 وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ٹیلی سکول ٹی وی سے گھروں میں محدود بچوں اور دور دراز علاقوں کے لوگوں کو تعلیم کی سہولت میسر آئے گی، ٹیلی سکول ٹی وی سے تعلیم بالغاں کو بھی فروغ دیا جاسکتا ہے، ٹیلی سکول میں بہتری کیلئے ہر ممکن تعاون فراہم کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو وفاقی وزارت تعلیم و پیشہ وارانہ تربیت اور پی ٹی وی کے اشتراک سے شروع کئے گئے ٹیلی سکول ٹی وی چینل کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وزیراعظم نے کہا کہ اس اہم اقدام پر وفاقی وزارت تعلیم و پیشہ وارانہ تربیت اور وزارت اطلاعات ونشریات کا شکرگزار ہوں اور انہیں مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کے باعث مشکل حالات کا سامنا ہے، بچے گھروں میں محدود ہیں اس ٹیلی سکول ٹیلی ویژن سے انہیں تعلیم کے حصول میں مدد ملے گی۔ وزیراعظم نے کہا کہ کورونا کی صورتحال میں بہتری کے بعد بھی امید ہے کہ یہ چینل کام کرتا رہے گا۔ ایسے دور دراز دیہی علاقے جہاں ابھی تک اساتذہ نہیں پہنچے ان علاقوں کیلئے یہ بہترین ذریعہ تعلیم ثابت ہوسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کی موبائل تک رسائی کے بعد وہ اب سیکھنا چاہتے ہیں۔ اس ٹیلی سکول کو اس تناظر میں تعلیم بالغاں کیلئے بھی استعمال کیا جاسکتا ہے۔ عمران خان نے کہا کہ ہمارے ملک میں بچوں کی بڑی تعداد سکولوں سے باہر ہے۔ اس ذریعے سے ان کو بھی تعلیم کی فراہمی ممکن بنائی جاسکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ابھی کسی کو معلوم نہیں ہے کہ کورونا کی یہ صورتحال کتنا عرصہ موجود رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ صحت اور تعلیم کے شعبوں کو نظر انداز کیا گیا۔ میرے حلقے کے لوگ بھی تعلیم اچھا نہ ہونے کی شکایات کرتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ٹیلی سکول میں بہتری کیلئے ہر ممکن تعاون فراہم کریں گے کیونکہ آگے بڑھنے کا یہی راستہ ہے جب تک دور دراز علاقوں میں انفراسٹرکچر نہیں بنتا اس ذریعے سے فائدہ اٹھایا جاسکتا ہے۔ بعدازاں وفاقی وزیر برائے وفاقی تعلیم و پیشہ وارانہ تربیت شفقت محمود نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ملک میں دو کروڑ سے زائد بچے سکول نہیں جاتے۔ ملک میں شرح خواندگی 60 فیصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہریوں کی موبائل تک رسائی کے بعد ان کی تعلیم میں دلچسپی بڑھی ہے۔ دیہی علاقوں میں ٹیکنالوجی کے ذریعے تعلیم کی فراہمی سے شرح خواندگی میں بہتری لائی جاسکتی ہے۔ اس موقع پر وزیراعظم کیمعاون خصوصی برائے اطلاعات ونشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان بھی موجود تھیں۔ ٹیلی سکول ٹی وی چینل کے ذریعے صبح آٹھ بجے سے شام چھ بجے تک کلاسسز ہوں گی جبکہ پہلی کلاس سے بارہویں کلاس کے بچوں کو تعلیم دی جائے گی