- الإعلانات -

داعش نے ایسا ظلم کیا کہ کوئی بھی سن نہ سکے

عراق اور شام میں سرگرم جنگجو گروپ ’داعش‘ نے دارلحکومت دمشق کے قریب سے اغواءکیے گئے 344مزدوروں میں سے 175کو قتل کردیاگیاجبکہ 144بھاگ نکلنے میں کامیاب ہوگئے تاہم 22مزدوروں کے بارے میں تاحال معلوم نہیں ہوسکا۔ سکائی نیوز نے شامی فوج کے حوالے سے بتایاکہ 175مزدوں کوقتل کردیااوریہ شایدداعش کی طرف سے اب تک کی سب سے زیادہ سویلین ہلاکتیں ہیں ۔ نیوزایجنسی ’SANA‘ نے وزارت انڈسٹری کے حوالے سے بتایاکہ مقامی لوگوں کی طرف سے سیمنٹ پلانٹ سے 250کارکنان کے لاپتہ ہونے کی اطلاع کے بعدوزارت انڈسٹری نے بتایاکہ مزدوروں اور کنٹریکٹرز کو جہادیوں نے اغواءکیاجبکہ سیمنٹ کمپنی نے اپنے ملازمین کیساتھ رابطہ منقطع ہونے پر کو آگاہ کیا۔ عربی ٹی وی چینل ’المدین ٹی وی ‘ نے بتایاکہ 140ملازمین بھاگنے میں کامیاب ہوگئے ، داعش نے فیکٹری کا کنٹرول حاصل کیا جبکہ باغیوں اور شام کی سرکاری فوج کی لڑائی کی وجہ سے علاقہ دوحصوں میں بٹ چکا ہے ۔ دوسری طرف برطانوی اخبار ’انڈیپنڈنٹ ‘ کے مطابق البادیہ سیمنٹ فیکٹری میں کام کرنے والے 300مزدوروں کو دمشق کے شمال مشرقی علاقے سے اغواءکیاگیاتھا اور دمیرکے قریب ایسے علاقے میں لے جایاگیاجہاں رواں ہفتے کے آغاز میں شامی افواج اورباغیوں میں لڑائی ہوئی جبکہ مالک کا ملازمین سے رابطہ منقطع ہوگیا۔