- الإعلانات -

ہ کورونا وائرس کے باعث پاکستان سمیت پوری دنیا میں مشکل حالات ہیں، وزیراعظم عمران خان کی تمام تر توجہ دیہاڑی دار اور مزدور طبقے کے لوگوں کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے پر مرکوز ہے

 پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سینیٹر فیصل جاوید نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کے باعث پاکستان سمیت پوری دنیا میں مشکل حالات ہیں، وزیراعظم عمران خان کی تمام تر توجہ دیہاڑی دار اور مزدور طبقے کے لوگوں کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے پر مرکوز ہے، تمام سیاسی جماعتیں اختلافات کو ایک طرف رکھ کر ملک سے وباءکے خاتمے اور مستحق افراد کو سہولیات دینے کیلئے حکومت کا ساتھ دیں۔ پیر کو نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ قومی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں تمام اسٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے متفقہ طور پر فیصلے کئے جاتے ہیں لیکن اجلاس ختم ہونے کے بعد وزیراعلی سندھ ان سے ہٹ کر باتیں کرنا شروع کر دیتے ہیں، ان سے اپیل ہے کہ وہ کورونا کے معاملے پر سیاست نہ کریں۔ فیصل جاوید نے کہا کہ حکومت زبانی باتوں پر یقین نہیں رکھتی، موجودہ صورتحال میں تمام وفاقی وزراءبھرپور طریقے سے کام کر رہے ہیں، وہ روزانہ کی بنیاد پر اپنی کارکردگی پیش کرتے ہیں اور آئندہ کے لائحہ عمل کے حوالے سے بتاتے ہیں، وفاق، پنجاب اور خیبرپختونخوا کے وزرائے صحت سرگرم ہیں تاہم سندھ کے وزیرصحت ابھی تک نظر نہیں آئے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی پذیر ممالک کیلئے یہ چیلنجنگ وقت ہے، حکومت کیلئے کورونا کے پھیلاﺅ کو روکنے کے ساتھ ساتھ بے روزگار ہونے والے لوگوں کا خیال رکھنا ترجیح ہے اس لئے اپوزیشن کو سیاسی پوائنٹ سکورنگ سے گریز کرنا چاہیے۔ سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ حکومت نے مستحقین کیلئے تاریخی ریلیف پیکیج کا اعلان کیا ہے جس سے 1 کروڑ 20 لاکھ مستحق خاندان مستفید ہوں گے اور مستحقین کو شفاف طریقے سے امدادی رقم دی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ صورتحال میں بھی ن لیگ اور پیپلزپارٹی کے بعض رہنما غیرضروری بیان بازی کر رہے ہیں جس سے صرف انہیں ہی نقصان ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ 18ویں ترمیم کے بعد صوبے خود مختار ہیں، صوبوں کو چاہیے کہ وہ عوام کو ہسپتالوں میں بنیادی سہولیات کی فراہمی کیلئے کام کریں۔ فیصل جاوید نے کہا کہ حکومت نے علمائے کرام کی مشاورت سے مساجد کیلئے 20 نکاتی گائیڈ لائن جاری کی ہیں، عوام کو چاہیے کہ وہ حفاظتی تدابیر پر عمل کریں، علمائے کرام نے کورونا صورتحال میں مثبت کردار ادا کیا ہے اور وہ آگے بھی لوگوں کو وباءسے متعلق آگاہی فراہم کرتے رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ نیب آزاد ادارہ ہے، حکومت اس کے کاموں پر مداخلت نہیں کرتی، ن لیگ اور پیپلزپارٹی کے قائدین بڑے پیمانے پر بدعنوانی میں ملوث رہے ہیں اور نیب ان کے خلاف تحقیقات کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کے رہنماﺅں پر جب کرپشن کے الزامات لگے تو انہوں نے وزارتیں چھوڑ کر خود کو قانون کے سامنے پیش کیا