- الإعلانات -

زخیرہ اندوزوں کے خلاف وزیراعظم کا دوٹوک اعلان

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت آٹے اور چینی کی وافر مقدار میں فراہمی کو یقینی بنائے گی جبکہ متعلقہ محکموں کو ضروری اشیا کی ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد کے خلاف مکمل کریک ڈاؤن کرنے کی ہدایت کردی گئی۔
سرکاری خبررساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس آف پاکستان (اے پی پی) کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم نے یہ بات آٹے اور چینی کے ذخیرے، ملک میں ان کی موجودہ تعداد، طلب اور رسد، مستقبل میں ضروریات کے مطابق درآمدات اور ضرورت کی اشیا کی قیمتوں کا جائزہ لینے کے لیے ہونے والے اجلاس میں کی۔
اس حوالے سے جاری اعلامیے کے مطابق اجلاس میں وزیر صنعت حماد اظہر، وزیر تحفظ خوراک سید فخر امام، وزیراعظم کے مشیر عبدالرزاق داؤد، شہباز گل اور عشرت حسین سمیت وزیراعظم کے سینیئر معاون خصوصی برائے اطلاعات لیفٹیننٹ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ اور دیگر متعلقہ سیکریٹریز اور سینیئر افسران نے شرکت کی جبکہ صوبائی چیف سیکریٹریز ویڈیو لنک کے ذریعے اجلاس میں شامل رہے۔
وزیرراعظم کو اجلاس میں آٹے اور چینی کی درآمدات اور اس کے موجودہ اسٹاک کے بارے میں تفصیل کے ساتھ بریفنگ دی گئی اور انہیں روزمرہ استعمال کی اشیا کی قیمتوں سے بھی آگاہ کیا گیا۔
عمران خان نے صوبائی حکومتوں کو آٹے کی فراہمی مزید بڑھانے کا کہا تاکہ مارکیٹ میں اس کی مناسب مقدار کو یقینی بنایا جاسکے، ساتھ ہی آٹے کی درآمدات سے متعلق تفصیلات پیش کرنے کی ہدایت بھی کی۔
وزیراعظم نے چیف سیکریٹریز کو چینی کے موجودہ اسٹاک کی فزیکل فزیبلیٹی تیار کرنے، پنجاب سیکریٹری کو جلد از جلد گنے کی کٹائی کی تاریخ کا اعلان کرنے جبکہ پنجاب اور سندھ کے چیف سیکریٹریز کو گنے کی سرکاری قیمتوں کا جلد اعلان کرنے کی ہدایات دیں۔