- الإعلانات -

نجات کی رات میں بھی لوڈ شیڈنگ کا عذاب نہ تھم سکا

لاہور(خصوصی رپورٹ)ملک میں آج شب برات کے موقع پر بھی لوڈ شیڈنگ کا عذاب جاری ہے ،مساجد میں عبادت میں مصروف لوگ شدید گرمی سے بے حال ،گناہوں کی معافیاں مانگنے والے نمازی حکومت کو کوستے رہے ۔تفصیلات کے مطابق آج ملک بھر میں لاکھوں مسلمان مساجد میں شب برات کے موقع پر جمع ہیں ،جہاں انفرادی اور اجتماعی عبادات کے بعد اپنے گناہوں کی معافی اور آئندہ زندگی اسلامی تعلیمات کے مطابق گزارنے کا عہد کرنے کے لئے اللہ کے حضور گڑا گڑا کر دعاوں میں مصروف ہیں ،بعض بڑی مساجد میں اس عبادت اور نجات کی رات میں لوگوں کے رش کے باعث جنریٹرز اور بجلی کا متبادل انتظام موجود ہے لیکن بجلی کی آنیاں جانیاں  اس رات بھی جاری ہیں،جس کے باعث پنکھے بند ہونے سے مساجد میں شدید حبس پیدا ہو جاتی ہے اور گرمی سے عبادت میں مصروف لو گ پسینے سے شرابور ہو رہے ہیں ۔اس سلسلہ میں جب لاہور میں ایک مسجد میں موجود نمازیوں سے گفتگو کی گئی تو ان کا کہنا تھا کہ حکومت کو آج کے روز لوڈ شیڈنگ کر کے اپنے لئے بد دعاؤں کا سامان پیدا نہیں کرنا چاہئے تھا ،حکومت کم ازکم آج کی رات کو لوڈ شیڈنگ سے مستثنیٰ قرار دے دیتی ،دوسری طرف چھوٹی مساجد میں عبادت گزار زیادہ مشکل کا شکار ہیں جہاں لائٹ جانے پر صرف ایک دو پنکھے چل رہے ہیں اور چند بلب ہی روشن ہیں ۔نمازیوں کا کہنا تھا کہ لوڈ شیڈنگ اور گرمی کے عذاب نے عبادت کا مزہ اور یکسوئی برباد کر دی ہے ۔ حکومت کو آج کی مقدس شب اللہ کا خوف کرنا چاہئے تھا ۔لوڈشیڈنگ کی وجہ سے لوگوں کی عبادات میں خلل آتا رہا ۔