- الإعلانات -

ٹی او آرز کے معاملے پر حکومت کا رویہ سنجیدہ نہیں: چوہدری شجاعت، ملک میں بے یقینی سی کیفیت ہو گئی ہے: سراج الحق

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) مسلم لیگ (ق) کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ حکومت ٹی او آرز کے معاملہ سنجیدہ  نہیں ہے ۔ جماعت اسلامی کے سربراہ سراج الحق نے کہا کہ پاکستان مشکل سے دوچار ہے اور ملک معاشی اعتبار سے کمزور ہو رہا ہے
میڈیا رپورٹس کے مطابق چوہدری شجاعت حسین کی سربراہی میں مسلم لیگ (ق) کے وفد نے منصورہ میں جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق سے ملاقات کی جس دوران مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ جماعت اسلامی سے ہمارابہت پرانا رشتہ ہے۔ سراج الحق سے ملاقات میں کرپشن کے خلاف، پانامہ لیکس اورٹی او آرز سمیت مختلف امور پر تبادل خیال کیا گیا۔
جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے کہا کہ منصورہ آنے پر چوہدری برداران کی پوری ٹیم کا مشکور ہوں جنہوں نے مطیع الرحمان کی شہادت پر تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کیا ۔ بنگلہ دیش میں جن کو پھانسی کی سزا دی گئی ان کا واحد جرم پاکستان سے محبت ہے اور بنگلہ دیش بھارت کو خوش کرنے کیلئے ایسا کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں بدامنی ہے، بیروزگاری میں اضافہ ہو رہا ہے  جبکہ پانامہ لیکس ایک اور مصیبت بن گئی ہے
سراج الحق نے مزید کہا کہ بیوروکریسی کودیکھ لیں،ان کے پاس نوٹوں کے انبار ہیں اور کرپشن میں ایک سیکرٹری ملوث نہیں بلکہ پورا سسٹم خراب ہے جبکہ پاکستان کے عوام غریب سے غریب تر ہو رہے ہیں اور اب تو کسانوں نے بھی چوراہوں پر دھرنے دینے شروع کر دیئے ہیں۔
پانامہ لیکس کے معاملے پر کمیشن سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا کہ حکومت شورشرابے میں معاملے کو دبانے کی کوشش نہ کرے، کمیشن صرف تحقیق کر سکتا ہے اور کچھ نہیں کیونکہ ماضی کے کمشنرکی رپورٹ کے بارے میں آج تک لوگوں کو نیں بتایا گیا ۔