- الإعلانات -

ملک کی جڑیں کھوکھلی کرنے والے اکثر چوہے پنجاب کے ہیں :نعیم الحق

اسلام آباد پاکستان تحریک انصاف کے ترجمان نعیم الحق کا کہنا ہے کہ پاناما لیکس پر بننے والی پارلیمانی کمیٹی کے مذاکرات میں عارضی تعطل پیدا ہو ا ہے تاہم اسحاق ڈار نے یقین دہانی کرائی ہے کہ پیر کو یہ تعطل ختم ہو جائے گا۔دس جون تک کمیٹی نے اپنی سفارشات پوری کرنی ہیں۔
میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رہنما پی ٹی آئی نے کہا کہ پاناما لیکس کے باعث ملک سنگین صورت حال سے گزررہا ہے،پانامالیکس تحقیقات کے حوالے سے حکومتی کمیٹی کے ساتھ مذاکرات جاری ہیں۔اسحاق ڈارنے یقین دلایا ہے کہ مزید تجاویز سامنے لائی جائیں گی۔متفقہ ٹی اوآر کے لیے کمیٹی کو 15 دن دیئے گئے ہیں،15 سوالات کے علاوہ حکومت دیگرسوالات شامل کرنا چاہے تو کوئی اعتراض نہیں۔
انہوں نے کہااپوزیشن بجٹ کا کڑی نظرسے جائزہ لے گی، آئندہ ہفتے بجٹ آنے والا ہے ،ملکی معیشت بے شمار دشواریوں سے گزر رہی ہے۔حکومت کے اہم ترین اقتصادی اہداف گزشتہ تین سالوں میں پورے نہیں ہو سکے جو ملک کی معاشی صورتحال کی حقیقتبیان کرتی ہے۔
انہوں نے مطالبہ کیا کہ حالیہ بجٹ بے حد اہمیت کا حامل ہے اس میں غریبوں کیلئے خصوصی مراعات رکھی جائیں،بجٹ میں غربت،جہالت کے خاتمہ کی پالیسیاں بنائی جائیں۔
گزشتہ سالوں میں بڑے بڑے جلسے ہوئے جس میں لاکھوں لوگوں نے شرکت کی جس کی وجہ یہی ہے کہ لوگ ملک کی ابتر معاشی صورتحال سے نالاں ہیں۔
علاوہ ازیں خواجہ سعد رفیق کی میڈیا سے گفتگو پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ سعد رفیق سینئر کارکن ہیں انہیں آج کے دن ایسے بیانات جاری نہیں کرنے چاہئیں تھے۔انہوں نے کہا کہ ایسی صورت میں جب حکومتی اور اپوزیشن ٹیمیں مذاکرات کر رہی ہیں اور وزیراعظم کے آپریشنز سے متعلق بیانات دیئے جا رہے ہیں سعد رفیق کا ایسے بیانات جاری کرنا مناسب نہیں۔انہوں نے کہا کہ جہاں تک چوہوں کی بات ہے تو جن چوہوں نے قوم کو لوٹا اور جڑیں کھوکھلی کی ہیں ان کی اکثریت پنجاب میں ہے۔
دریں اثنا نعیم الحق نے عمران خان کے وزیر اعظم کی عیادت کیلئے عمران کان کے لندن جانے کے امکان کی تردید کی اور وزیراعظم کی جلد صحت یابی کے لیے دعاو¿ں کا اظہا رکیا۔